پاکستان برطانیہ کیساتھ تعلقات کو اہمیت دیتا ہے،سردارایازصادق

پاکستان برطانیہ کیساتھ تعلقات کو اہمیت دیتا ہے،سردارایازصادق

  



اسلا م آباد(سٹاف رپورٹر)سپیکر قومی اسمبلی سر دار ایاز صادق نے کہا ہے کہ پاکستان بر طانیہ کے ساتھ اپنے دیر ینہ دوستانہ تعلقات کو بڑی اہمیت دیتا ہے اور پارلیمانی اور اقتصادی رابطوں کو فروغ دے کر موجودہ تعلقات کو مزید مستحکم بنانے کا خواہش مند ہے ۔انہوں نے ا ن خیالات کا اظہار برطانیہ کے وزیر برائے ایشیا اینڈ پیسفک مارک فیلڈسے گفتگو کرتے ہوئے کیا جنہوں نے بدھ کے روز پارلیمنٹ ہاؤس میں سپیکر سے ملاقات کی ۔سپیکر نے کہا کہ پاکستان برطانیہ کے ساتھ اپنی اسٹر ٹیجک شراکت داری کو بڑی اہمیت دیتا ہے اور دونوں ممالک اہم علاقائی اور عالمی امور پر یکساں موقف کے حامل ہیں ۔انہوں نے دو طر فہ تعلقات کو نئی بلندیوں تک پہنچانے کے لیے دونوں ممالک کی سیاسی قیادت اراکین پارلیمنٹ اور عوامی سطح پر رابطوں میں اضافے کی ضرورت پر زور دیا ۔سر دار ایاز صادق نے دونوں ممالک کے ا راکین پارلیمنٹ کے وفو د کے تبادلوں اور دونوں ممالک کی پارلیمانوں میں فرینڈ شپ گروپس کو فعال بنانے کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے کہا کہ پارلیمانی سفارت کاری ہم آہنگی اور دوطرفہ تعاون کو فروغ دینے میں اہم کردار ادا کر سکتی ہے ۔سپیکر نے مہمان وزیر کو پاکستان کے تعلیمی اداروں اور یونیورسٹیوں میں پارلیمانی طریقہ کار اور قانون سازی کے مسودے کے مضامین کے اجراء سے متعلق اقدام سے بھی آگاہ کیا ۔انہوں نے کہا کہ دہشت گردی ایک عالمی چیلنج ہے اس کا کسی مذہب یا کسی ملک سے کوئی تعلق نہیں ہے ۔انہوں نے مزید کہا کہ اس عالمی خطرے کے خاتمے کے لیے متحدہ اور اجتماعی کوششیں واحد حل ہیں ۔انہوں نے مقبوضہ کشمیر میں معصوم کشمیری عوام پر بھارتی مظالم کا نوٹس کی لینے کی ضرورت پر زور دیا ۔انہوں نے کہا کہ پاکستان اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق مسئلہ کشمیر کو حل کرنے کے لیے پر عزم ہے اور اس مسئلے کو مذاکرات کے ذریعے حل کرنا چاہتا ہے ۔ سپیکر نے خطے میں پائیدار امن اور سلامتی کے عزم کا اعادہ کرتے ہوئے کہا کہ خطے میں پائیدار امن ہی خطے کی خوشحالی اور تر قی کی ضمانت ہے ۔انہوں نے کہا کہ پاکستان تمام ہمسایہ ممالک کے ساتھ خوشگوار تعلقات چاہتا ہے اور پارلیمانی وفود کے تبادلوں اور مذاکرات کو فروغ دینا چاہتا ہے ۔برطانیہ کے وزیر برائے ایشیا اینڈ پیسفک مارک فیلڈنے سپیکر کے تاثرات کو سر اہتے ہوئے کہا کہ برطانیہ پاکستان کو اپنا قریبی دوست اور ا ہم تجارتی شر اکت دار سمجھتا ہے ۔انہوں نے کہا کہ برطانیہ پاکستان کے ساتھ مختلف شعبوں میں تعاون کوفروغ دینے کی خواہش رکھتا ہے ۔پارلیمانی فرینڈ شپ گروپس کے کردار کا ذکر کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ دونوں پارلیمانوں میں قائم فرینڈ شپ گروپس دوطر فہ تعلقات کو مستحکم بنانے میں اہم کردار ادا کرسکتے ہیں ۔انہوں نے سپیکر کو اراکین پارلیمنٹ اور پارلیمانی عملے کی استعداد اکار میں اضافے کے لیے برطانوی حکومت کی طرف سے ہر ممکن تعاون کا یقین دلایا ۔

مزید : کراچی صفحہ اول