کینیا اور تنزانیہ کے درمیان گائے اور چوزوں کی وجہ سے سفارتی تنازعہ پیدا ہوگیا

کینیا اور تنزانیہ کے درمیان گائے اور چوزوں کی وجہ سے سفارتی تنازعہ پیدا ہوگیا
کینیا اور تنزانیہ کے درمیان گائے اور چوزوں کی وجہ سے سفارتی تنازعہ پیدا ہوگیا

  



نیروبی (ڈیلی پاکستان آن لائن)قوموں اور ممالک کے درمیان لڑائیاں اور سفارتی اتار چڑھاﺅ کے کئی موضوعات ہوتے ہیں، کوئی بھی ملک اپنی خود مختاری کے خلاف کوئی بھی مہم جوئی پسند نہیں کرتا مگر دو افریقی ممالک کے درمیان انتہائی معمولی بات پر خطرناک تنازعہ پیدا ہوگیا ہے ، تنزانیہ اور کینیا کے درمیان گائے اور چوزوں کی وجہ سے خطرناک سفارتی تنازعہ پیدا ہوگیا ، کینیا کی وزیر خارجہ نے تنزانیہ کو خط لکھ کر احتجاج کردیا ۔

سابق چیئرمین نیب کو عبرتناک سزا دینی چاہیے: عمران خانپریس ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق دو افریقی ممالک کے درمیان لفظی گولا باری شروع ہوگئی ہے اور دونوں ممالک نے ایک دوسرے کے ساتھ تعلقات منقطع کر لئے ہیں، ٹی وی کے مطابق گذشتہ ہفتے تنزانیہ نے کینیا سے بارڈر کراس کرکے ان کے علاقے میں گھاس چرنے والے 1300مویشی ضبط کر لئے تھے جبکہ اسی سے اگلے دن کینیا سے درآمد کئے جانے والے 6500چوزے بھی بحق سرکار ضبط کر لئے جس کے بعد دونوں ممالک کے درمیان سفارتی تعلقات کشید ہ ہوگئے ، دوسری جانب کینیا کی وزیر خارجہ آمنہ محمود نے تنزانیہ کے وزیر خارجہ کے نام خط لکھ کر بھرپور احتجاج کیا ہے۔ دونوں ممالک کی معیشت ایک دوسرے پر منحصر ہے جبکہ کئی لوگوں کا انحصار اس دو طرفہ تجارت پر ہے، کینیا اور تنزانیہ کے درمیان کشیدہ تعلقات کی وجہ سے کئی لوگوں کا روزگار ختم ہونے کا خطرہ بھی پیدا ہوگیا ہے۔

مزید : بین الاقوامی


loading...