فلیگ شپ ریفرنس، حسن نواز کی جائیداد سے متعلق دستاویزات پیش

فلیگ شپ ریفرنس، حسن نواز کی جائیداد سے متعلق دستاویزات پیش

  

اسلام آباد (سٹاف رپورٹر)احتساب عدالت نے سابق وزیر اعظم محمد نواز شریف اور ان کے وکیل کی عدم پیشی پر فلیگ شپ انویسمنٹ ریفرنس کی سماعت آج تک کیلئے ملتوی کردی ، نیب کی طرف سے حسن نواز کی جائیداد سے متعلق مختلف دستاویزات پیش کی گئیں ، نواز شریف اپنی اہلیہ کے ایصال ثواب کیلئے قرآن خوانی کے سبب عدالت میں پیش نہ ہوئے ۔ احتساب عدالت میں فلیگ شپ انویسمنٹ ریفرنس میں نیب کے تفتیشی افسر محمد کامران نے اپنا بیان قلمبند کرایا ، بیان میں بتایاگیا کہ حسن نواز کی آف شور کمپنیوں کی فنانشل اسٹیٹمنٹس کو عدالتی ریکارڈ کا حصہ بنوا رہے ہیں، آف شور کمپنیوں کا ریکارڈ کمپنیز ہاؤس لندن سے حاصل کیا گیا ہے۔ اس موقع پر نیب کی جانب سے عدالت میں دائر کردہ درخواست میں مؤقف اختیار کیا گیا کہ ایک ایم ایل اے موصول ہوا ہے جسے ریکارڈ کا حصہ بنایا جائے۔ اس موقع پرمعاون وکیل نے مؤقف اختیار کیا کہ خواجہ حارث اس پر دلائل دیں گے۔نیب عدالت کے جج محمد ارشد ملک نے کہاکہ پہلے بیان دے لیں، درخواست بعد میں دیکھتے ہیں۔ قبل ازیں سماعت کے آغاز پر خواجہ حارث کے معاون وکیل زبیر خالد نے میاں نواز شریف کی ایک روز کیلئے حاضری سے استثنیٰ کی درخواست دائر کرتے ہوئے مؤقف اختیار کیاکہ وہ بیگم کلثوم نواز کی ایصال ثواب کیلئے دعا اور قرآن خوانی کے باعث وہ پیش نہیں ہو سکے جس پرعدالت نے میاں نواز شریف کی عدالت میں حاضری سے ایک دن کے استثنیٰ کی درخواست منظور کر لی۔

فلیگ شپ ریفرنس

مزید :

صفحہ اول -