زیادہ جم جانے کا خطرناک نقصان سائنسدانوں نے بتادیا

زیادہ جم جانے کا خطرناک نقصان سائنسدانوں نے بتادیا
زیادہ جم جانے کا خطرناک نقصان سائنسدانوں نے بتادیا

  

اوسلو(مانیٹرنگ ڈیسک) جم میں جا کر کسرت کرنا صحت کے لیے بہت مفید ہوتا ہے تاہم بعض لوگوں پر جم جانے اور باڈی بنانے کا ایک جنون سوار ہو جاتا ہے۔ سائنسدانوں نے اب ایسے زیادہ جم جانے والے افراد کے لیے خطرناک وارننگ جاری کر دی ہے۔ میل آن لائن کے مطابق سائنسدانوں نے بتایا ہے کہ ”زیادہ جم جانا اور اس کواپنے سر پر سوار کر لینا ذہنی اعتبار سے انتہائی خطرناک ثابت ہوتا ہے اور اس کے نتیجے میں آدمی ایسی غیرصحت مندانہ سرگرمیوں کی طرف راغب ہو جاتا ہے جو اس کی جسمانی صحت کو بھی تباہ کر دیتی ہیں۔ ایسا شخص سنگین ڈپریشن کا شکار ہو کر بسیار خوری اور غیرقانونی سٹیرائیڈ کے استعمال کی طرف چلا جاتا ہے جو ایک نقصان دہ عمل ہے۔“

نارویجن یونیورسٹی آف سائنس اینڈ ٹیکنالوجی کے سائنسدانوں نے اس تحقیق میں جم جانے والے 2400سے زائد مردوں پر مشتمل سروے کیا ، جن کی عمریں 18سے 32سال کے درمیان تھیں۔ تحقیقاتی ٹیم کے سربراہ ڈاکٹر ٹرینی ٹیٹلی آئیک نیس کا کہنا تھا کہ ”تحقیق کے نتائج میں معلوم ہوا کہ 4فیصد مرد، جو جم کو سر پر سوار کر لیتے ہیں، وہ قانونی و غیرقانونی سپلیمنٹس اور سٹیرائیڈز لینا شروع کر دیتے ہیں۔ جتنے لوگوں کا سروے کیا گیا ان میں سے 10فیصد باڈی امیج ڈس آرڈر کا شکار تھے اور اپنے جسم کے حوالے سے انتہائی متفکر رہتے تھے۔یہ لوگ جب رونالڈو جیسے پروفیشنلز کی باڈی دیکھتے ہیں تو احساس کمتری میں مبتلا ہو جاتے ہیں، نتیجے میں یہ زیادہ سے زیادہ جم جانے لگتے ہیں اور باڈی بنانے کے وہ طریقے استعمال کرنے لگتے ہیں جو بالآخر ان کی صحت کی تباہی کا سبب بنتے ہیں۔“

مزید : تعلیم و صحت