پارلیمنٹ میں ناموس رسالت ﷺکے خلاف اکٹھی ہونے والی جماعتوں کا اصل چہرہ قوم کے سامنے آگیا:سینیٹر سراج الحق

پارلیمنٹ میں ناموس رسالت ﷺکے خلاف اکٹھی ہونے والی جماعتوں کا اصل چہرہ قوم ...
پارلیمنٹ میں ناموس رسالت ﷺکے خلاف اکٹھی ہونے والی جماعتوں کا اصل چہرہ قوم کے سامنے آگیا:سینیٹر سراج الحق

  

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن)امیر جماعت اسلامی پاکستان سینیٹر سراج الحق نے کہاہے کہ حیرت کی بات ہے کہ اسمبلی میں لڑنے ، ایک دوسرے کو چور چور کہنے اور دست و گریبان جماعتیں پارلیمنٹ کے اندر آسیہ کی رہائی کے حق میں ایک ہو گئی ہیں،ماضی میں جن پارٹیوں نے سپریم کورٹ کے فیصلوں کو کبھی تسلیم نہ کیا صرف توہین رسالت کیس میں گرفتار آسیہ کی رہائی کے فیصلے پر مغربی استعمار کو خوش کرنے کے لیے اکٹھی ہوگئی ہیں،آئین کی حفاظت کے لیے اب قوم کو بھی متحد ہونا پڑے گا،حکمران قیام پاکستان کے لیے دی جانے والی قربانیوں کو عملاً ضائع کرنے پر تلے ہوئے ہیں،حکمران بتائیں کہ ہندوستان اور پاکستان کے سیاسی معاشی اور تعلیمی نظام میں کیا فرق ہے؟ہندوستان میں مسلمانوں کو جو مذہبی آزادی حاصل ہے ، وہی پاکستان کے مسلمانوں کو حاصل ہے،شریعت کے نفاذ اور نظام اسلام کے نعرے پر عمل نہیں ہورہا جو پاکستان کے قیام کی بنیاد ہے،دین اور ناموس رسالت ﷺکے خلاف اکٹھی ہونے والی جماعتوں کا اصل چہرہ قوم کے سامنے آگیاہے ،لوگ سپریم کورٹ کے فیصلے سے مطمئن نہیں ہیں،حکومت پورے کیس پر نظر ثانی کے لیے اقدامات کرے اور آسیہ کا نام ای سی ایل میں ڈالا جائے،مغرب توہین رسالتﷺ  کے مجرموں کو ہمیشہ وی آئی پی پروٹوکول دیتاہے اور بدقسمتی سے اسلامی دنیا کے حکمران پیغمبر اسلام ﷺ کی ناموس کے تحفظ کی بجائے مغرب کی خوشنودی کے لیے ان مجرموں کے سرپرست بن جاتے ہیں ۔

تفصیلات کے مطابق  منصورہ لاہور میں خطاب کرتے ہوئےسینیٹر سراج الحق نے کہاکہ حضرت محمد ﷺ سے عقید ت و محبت او ر شان رسالت کی حفاظت آئین پاکستان کا تقاضا ہے،پہلے بھی بعض قوتوں نے پارلیمنٹ کے حلف نامے میں تبدیلی کی کوشش کی تھی ، پوری قوم کو بیدار اور ہوشیار رہنا ہوگا، جب تک حکومت خود مدعی نہ بن جائے،عوام سڑکوں پر آنے پر مجبور ہوں گے ۔ انہوں نے کہاکہ پاکستان ہمیں حضور ﷺکے صدقے میں ملاہے، جب تک ملک میں اسلامی نظام نافذ نہیں ہوتا ، حضورﷺکی ناموس اور ملک کی اسلامی شناخت کی حفاظت نہیں ہوسکتی ۔ انہوں نے کہاکہ حضور ﷺ کی شان میں گستاخی کرنے والے کو مغرب میں وی آئی پی پروٹوکول ملتاہے ،یہ دورنگی ، منافقت اور اسلام د شمنی کی بدترین مثال ہے،آسیہ مسیح کی رہائی کے فیصلے پر بھی مغرب میں ہرجگہ خوشیاں منائی گئیں جبکہ دنیا بھر کے مسلمان ، خاص طو رپر پاکستانی عوام صدمے سے دوچار ہیں ۔ انہوں نے کہاکہ حضور ﷺ کی سیرت کے پیغام کو ہر پاکستانی تک پہنچانے کے لیے تحریک ناموس رسالت ملک بھر میں سیر ت رسول ﷺپر پروگرامات کرے گی ، صوبائی و وفاقی دارالحکومت سمیت تمام شہروں میں بڑے بڑے عوامی جلسے کیے جائیں گے ۔ انہوں نے ہدایت کی کہ کارکن ربیع الاول کو دعوت کا مہینہ بنائیں اور ملک میں نظام مصطفیﷺکے نفاذ کی جدوجہد کو تیز کردیں۔

مزید :

قومی -