بچپن میں سانولی رنگت کی وجہ سے باتیں سننا پڑتی تھیں‘ آمنہ الیاس

  بچپن میں سانولی رنگت کی وجہ سے باتیں سننا پڑتی تھیں‘ آمنہ الیاس
   بچپن میں سانولی رنگت کی وجہ سے باتیں سننا پڑتی تھیں‘ آمنہ الیاس

  



لاہور(فلم رپورٹر)اداکارہ و ماڈل آمنہ الیاس نے کہا ہے کہ معاشرے نے خوبصورتی کا معیار گورے رنگ کو بنا لیا ہے۔انہوں نے کہا کہ ہماری مائیں چاہتی ہیں کہ ان کا بیٹا بیشک جس رنگ کا بھی ہے بہو گوری ہونی چاہیے، انہوں نے کہا کہ بچپن میں انہیں رشتے داروں کی جانب سے سانولی رنگ کے حوالے سے باتیں سننا پڑتی تھیں اور انہیں رنگ گورا کرنے بارے طرح طرح کے ٹوٹکے بتائے جاتے تھے، انہوں نے کہا کہ سانولی رنگت والی لڑکیاں دوسروں کی باتیں سن کو اپنی جلد کو خراب نہ کریں بلکہ اپنا خیال رکھتے ہوئے آگے بڑھیں۔

مزید : کلچر


loading...