نوازشریف بیرون ملک علاج کیلئے رضامند لیکن دراصل انہیں راضی کس نے کیا؟ شہبازشریف یا مریم نہیں بلکہ۔۔۔ پتہ چل گیا

نوازشریف بیرون ملک علاج کیلئے رضامند لیکن دراصل انہیں راضی کس نے کیا؟ ...
نوازشریف بیرون ملک علاج کیلئے رضامند لیکن دراصل انہیں راضی کس نے کیا؟ شہبازشریف یا مریم نہیں بلکہ۔۔۔ پتہ چل گیا

  



لاہور (ویب ڈیسک) سابق وزیراعظم نوا ز شریف کو ان کی والدہ بیگم شمیم اختر نے بیرون ملک علاج کے لیے جانے پر راضی کیا۔

روزنامہ جنگ کے مطابق نواز شریف علاج کے لیے بیرون ملک نہیں جانا چاہتے تھے، مگر والدہ بیگم شمیم اختر اور دیگر اہلخانہ کے اصرار پر حامی بھرلی۔ اخباری ذرائع کے مطابق سابق وزیراعظم علاج کے لیے اگلے ہفتے لندن روانہ ہوسکتے ہیں، ان کے ہمراہ چھوٹے بھائی اور اپوزیشن لیڈر شہباز شریف بھی ہوں گے۔نواز شریف جو پلیٹ لیٹس میں کمی، شوگر، بلڈ پریشر اور عارضہ قلب سمیت دیگر بیماریوں میں مبتلا ہیں، کی آئندہ چند روز میں لندن روانگی کا امکان ہے۔سابق وزیراعظم کے چھوٹے بھائی شہباز شریف نے تمام نجی اور سیاسی مصروفیات ترک کردی ہیں اور وہ زیادہ تر وقت اپنے بھائی کی تیمار داری میں گزار رہے ہیں۔

ذرائع کے مطابق نوازشریف کے سروسز ہسپتال میں قیام کے دوران انہیں بیرون ملک بھیجنے کی تجویز زیر غورآئی تھی۔ڈاکٹروں کا کہنا تھا کہ فضائی سفر کے لیے ایئر ایمبولینس پلیٹ لٹس 50ہزار سے زائد اور ڈاکٹرز کا ساتھ ہونا ضروری ہے، ورنہ پریشر پڑنے سے دماغ کی شریانیں متاثر ہوسکتی ہیں۔

مزید : علاقائی /پنجاب /لاہور


loading...