11سال بعد بھی زلزلہ زدگان خیموں میں زندگی گزار رہے ہیں،عبدالرؤف

11سال بعد بھی زلزلہ زدگان خیموں میں زندگی گزار رہے ہیں،عبدالرؤف

لاہور(خبر نگار خصوصی)فلاح انسانیت فاؤنڈیشن کے چیئرمین حافظ عبد الرؤف نے کہا ہے کہ آزاد کشمیر و سرحد کے زلزلہ کو گیارہ سال گزرنے کے باوجود متاثرین کی بڑی تعداد خیموں میں کسمپرسی کی زندگی بسر کر رہی ہے۔فلاح انسانیت فاؤنڈیشن کے زیر اہتمام متاثرہ علاقوں میں درجنوں تعلیمی،طبی او رفلاحی منصوبہ جات چل رہے ہیں جس سے سالانہ لاکھوں لوگ مستفید ہورہے ہیں۔زلزلہ متاثرین و مہاجرین کے لئے ماہانہ بنیادوں پر خشک راشن کی فراہمی کے ساتھ ساتھ دیگر ضروریات زندگی کی اشیاء بھی مہیا کی جارہی ہیں ۔اپنے بیان میں انہوں نے کہاکہ مظفرآبادمیں ایف آئی ایف ریسکیو سنٹر اہل کشمیر کے لئے بہت بڑا ریلیف ہے۔

اس ریسکیو سنٹر کے ذریعے پورے کشمیر میں ہونے والے حادثات و سانحات کے موقع پر بروقت پہنچ کر ایف آئی ایف کے رضاکار لوگوں کی قیمتی جانیں بچاتے ہیں ۔ انہوں نے بتایا کہ 2005ء میں آنے والے زلزلہ میں جماعۃ الدعوۃ کے رضاکاروں نے اپنی جانوں پر کھیل کر ہزاروں متاثرین کوملبے تلے سے نکالا اور محفوظ مقامات پر منتقل کیا۔امدادی رضاکار گھنٹوں پیدل سفر کر کے دور دراز علاقوں میں پھنسے متاثرین کو راشن پہنچاتے رہے ۔اسی طرح میڈکل کیمپوں اور فیلڈ ہسپتالوں میں چار لاکھ سے زائد متاثرین کا علاج معالجہ کیا گیا،20خیمہ بستیوں میں ہزاروں زلزلہ متاثرہ خاندانوں کی کفالت کی گئی ،بچوں کو تعلیمی سہولیات کی فراہمی کے لئے 214فیلڈسکول قائم کئے گئے جو تاحال ان علاقوں میں کام کررہے ہیں ۔

مزید : میٹروپولیٹن 1