وزیر اعظم واشنگٹن کے خوف سے دہلی کو خوش رکھنا چاہتے ہیں حامد رضا

وزیر اعظم واشنگٹن کے خوف سے دہلی کو خوش رکھنا چاہتے ہیں حامد رضا

لاہور (خبر نگار خصوصی)سنی اتحاد کونسل پاکستان کے چیئرمین صاحبزادہ حامد رضا نے کہا ہے کہ ہمارے وزیر اعظم واشنگٹن کے خوف سے دہلی کو خوش رکھنا چاہتے ہیں۔ پیپلز پارٹی حکومت کے ساتھ ساز باز کی بجائے اپوزیشن کا کھل کر ساتھ دے۔ حکومت کے ساتھ سودے بازی کرنے والی پارٹی عوام کی نظروں میں گر جائے گی۔ سنی اتحاد کونسل کرپشن کے خلاف چلنے والی ہر تحریک کا ساتھ دے گی۔ حکمران ساڑھے تین سالوں میں عوام کا کو ئی مسئلہ حل نہیں کرسکے۔ حکومتی وزراء کی اشتعال انگیزی کی وجہ سے پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس کے مطلوبہ مقاصد پورے نہیں ہوسکے۔ قوم سیاستدانوں اور حکمرانوں کی بیرون ملک جائیدادوں کا حساب چاہتی ہے۔ سرحدوں پر کشیدگی پانامہ پانامہ لیکس سے توجہ ہٹانے کی سازش ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے سنی اتحاد کونسل کی کور کمیٹی کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔

صاحبزادہ حامد رضا نے مزید کہا کہ مودی خطے کے امن کیلئے موذی بن چکا ہے۔ اٹھارہ کروڑ پاکستانی مظلوم مظلوم اور محکوم کشمیریوں کے ساتھ ہیں۔ بھارت خطے کے ممالک پر بالادستی اور سیاسی و معاشی کنٹرول چاہتا ہے۔ مقبوضہ جموں و کشمیر بھارت کے ہاتھوں سے نکل چکا ہے۔ کشمیر کی آزادی کے بعد باقی بھارت بھی تسبیح کے دانوں کی طرح بکھر جائے گا کیونکہ بھارت کی 22ریاستوں میں علیحدگی کی تحریکیں عروج پر ہیں۔ بھارت نے مقبوضہ کشمیر کو عقوبت خانے میں تبدیل کردیا ہے۔ بھارت نے سند ھ طاس معاہدہ توڑا تو اسے منہ کی کھانا پڑے گی کیونکہ عالمی بنک سندھ طاس معاہدے کا ضامن ہے۔ امریکہ نے بھارت کو افغانستان میں اڈے مہیا کئے ہیں۔

مزید : میٹروپولیٹن 4