مسلم لیگ ن کی سیاسی سرگرمیاں تیز ، وزیراعظم کی تاجر رہنماؤں سے ملاقاتیں ، پارٹی الیکشن کی تیاریاں مرکزی کونسل کا اجلاس طلب

مسلم لیگ ن کی سیاسی سرگرمیاں تیز ، وزیراعظم کی تاجر رہنماؤں سے ملاقاتیں ، ...

 لاہور/اسلام آباد(کامرس رپورٹر،آئی این پی،اے این این،مانیٹرنگ ڈیسک) مسلم لیگ(ن) نے تحریک انصاف کے دھرنے سے نمٹنے کیلئے حکمت عملی مرتب کرنا شروع کردی،صوبائی دارالحکومت کی تاجرتنظیموں کے عہدیداروں سے ملاقاتیں کرکے ان کو درپیش مسائل حل کرنے کی یقین دہانیاں کرادیں علاوہ ازیں مسلم لیگ (ن) نے پارٹی انتخابات کیلئے 17 اکتوبر کو مرکزی کونسل کا اجلاس طلب کر لیا۔ نجی ٹی وی کے مطابق اجلاس میں نواز شریف کو دوبارہ پارٹی صدر منتخب کرنے کے ساتھ ساتھ دوسرے پارٹی عہدیداروں کا انتخاب بھی عمل میں لایا جائے گا ۔گور نرہاؤس لاہور میں گزشتہ روزتاجروں کے وفود سے گفتگو اور بجلی کے منصوبوں کے حوالے سے اعلی سطحی اجلاس میں گور نر محمد رفیق رجوانہ ‘وزیر اعلی پنجاب میاں شہبا زشر یف ‘وفاقی وزراء اسحاق ڈار ‘احسن اقبال ‘وزیر پانی وبجلی خواجہ محمد آصف سمیت دیگر بھی موجود تھے جبکہ وزیر اعلی پنجاب میاں شہبا زشر یف نے وزیر اعظم کو پنجاب میں بجلی کے منصوبوں کے حوالے سے کیے جانیوالے اقدامات اور آئندہ کی حکمت عملی کے حوالے سے بر یفنگ دی،اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے وزیر اعظم میاں محمد نوازشر یف نے کہا کہ دہشت گردی کے ناسور کو جڑ سے اکھاڑ پھینکیں گے ضرب عضب آپر یشن جاری ہے ‘ سی پیک منصوبے سے خطے میں انتہا پسندی ‘غر بت اور بے روگاری بھی ختم ہوگی ‘سی پیک ملک اور خطے کیلئے ترقی اور خوشحالی کا منصوبہ ہے جس سے ملک میں معاشی انقلاب آئیگا ‘سی پیک کے تحت چاروں صوبوں میں کام جاری ہے ذاتی طور پر سی پیک منصوبوں کی نگرا نی کر رہا ہوں‘2013کے مقابلے میں پاکستان معاشی طورپرآج زیادہ مضبوط اور محفوظ ہے’(ن) لیگ کی حکومت نے ملک کو معاشی طور پر بھی درست سمت میں ڈال دیا ہے اور ملک معاشی طور پر مستحکم ہو رہا ہے ‘ ملک میں ہر صورت بجلی کی قلت کو 2018تک ختم کیا جا ئیگا 37ارب ڈالرزصرف بجلی کے منصوبوں پر خر چ ہو رہے ہیں قوم کو بجلی بھی سستی ملے گی ‘سر مایہ کاری کے فروغ کیلئے بنیادی اصلاحات کی گئی ہیں ‘ہم مخالفین کے پروپیگنڈے کو خاطر میں لائے بغیر ملک و قوم کی خدمت جاری رکھیں گے،پاکستان کی ترقی و خوشحالی کیلئے مزید محنت سے کام کرنا ہے،کاروبار کرنے کا نظام جتنا آسان ہو گا اتنی زیادہ سرمایہ کاری ہو گی جبکہ تاجروں اور صنعتکاروں کی جانب سے وفاقی اور پنجاب حکومت کی جانب سے کیے جانیوالے اقدامات پر مکمل اعتماد کا اظہار کرتے ہوئے اپنے مطالبات کے حوالے سے بھی آگاہ کیا جس پر وزیر اعظم نوازشر یف نے ان کومسائل کے مکمل حل کی یقین دہانی کرواتے ہوئے ہم ملک میں کاروباری طبقے کیلئے کام کر نے کو زیادہ سے زیادہ آسان بنانا چاہتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ جب ہم اقتدار میں آئے اس وقت ملک کی معاشی پوزیشن پوری قوم کے سامنے ہیں مگر آج پاکستان ہر گزرتے دن کے ساتھ مضبوط اور خوشحال ہورہا ہے اور عام آدمی کی زندگی میں بھی ترقی اور خوشحالی آرہی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ سی پیک کا منصوبہ نہ صرف پاکستان بلکہ پورے خطے کیلئے ایک گیم چینجر ہے چین کا46ارب ڈالرز سے زائد کا یہ منصوبہ پاکستان سے بھی دوستی کا ثبوت ہے ۔ انہوں نے کہا کہ میں خود سی پیک کے تحت چاروں صوبوں میں جاری منصوبوں کی نگرانی کر رہا ہوں سی پیک کے تحت گودار سی پورٹ اور اےئر پورٹ بھی بن رہا ہے اور اس سے پاکستان کی بھی قسمت بد ل جا ئیگی اور اس سے ترقی کی نئی راہیں کھلیں گی ۔ انہوں نے کہا کہ تاجر برداری کے مسائل کے حل کیلئے ہنگامی بنیادوں پر اقدامات کیے جا رہے ہیں کیونکہ تاجر ملک کو معاشی طور پر مضبوط بنانے میں اپنا کردار داد کر رہے ہیں۔ اس موقعہ پر تاجروں نے سمگلنگ کی روک تھام اور ٹیکس میں کمی کیلئے اقدمات کر نے کا مطالبہ کیا جس پر وزیر اعظم نے ان کو تمام مسائل کے حل کی یقین دہانی کرواتے ہوئے کہا کہ (ن) لیگ کی حکومت نے اقتدار میں آتے ہی ملک کو معاشی طور پر درست سمت میں ڈال دیا ہے اور آج پاکستان معاشی طور پر مضبوط اور محفوظ ہے۔ بجلی کے منصوبوں کے حوالے سے اجلاس سے خطاب میں وزیر اعظم میاں نوازشر یف نے کہا کہ موجودہ حکومت کے اقتدار میں�آنے کے بعد بجلی کی لوڈشیڈ نگ میں نمایاں کمی ہوئی ہے اور2018تک ہر صورت ملک سے بجلی کی قلت کو ختم کیا جا ئیگا۔ وزیر اعظم نے کہا کہ 2018تک نہ صرف بجلی کی قلت ختم ہو گی بلکہ قوم کو سستی بجلی بھی ملے گی اس موقعہ پر وزیر اعظم نے ہدایات جاری کیں کہ بجلی کے منصوبوں پر کام کی رفتار کو مزید تیز کیا جا ئے ۔کاروباری شخصیات نے وزیراعظم نواز شریف کی قیادت میں حکومتی اقدامات پر بھرپور اعتماد کا اظہار کیا ۔ تاجروں کے وفد نے وزیراعظم سے مطالبہ کیا کہ ٹیکسوں کی شرح کو کم اور دہرے ٹیکس ختم کئے جائیں جبکہ بجلی اور گیس کی قیمتوں میں بھی کمی کی جائے۔

نوازشریف

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر ،آئی این پی)پاکستان تحریک انصاف کے اسلام آباد بند کرنے کے اعلان کے بعد حکومت نے بھی شہر کو محفوظ بنانے کیلئے حکمت عملی کی تیاری شروع کردی،وزیراعظم محمد نوازشریف نے وزیرداخلہ چوہدری نثار علی خان کو اسلام آباد میں سیکیورٹی کا فول پروف پلان بنانے کی ہدایت کردی۔نجی ٹی وی کے مطابق ہفتہ کو حکومت نے تحریک انصاف کے اسلام آباد میں دھرنے کے اعلان کے بعد شہر کو محفوظ بنانے کیلئے حکمت عملی کی تیاری شروع کردی،سیاسی اور انتظامی حکمت عملی پر مشاورت شروع کردی گئی۔وزیراعظم نے وزیرداخلہ کو ہدایت کردی کہ اسلام آباد میں سکیورٹی کا فول پروف پلان بنایا جائے،عوام اور سرکاری تنصیبات کا تحفظ ہماری پہلی ترجیح ہونی چاہیے۔وزیراعظم نے کہا کہ احتجاج کے نام پر نظام زندگی اور سرکاری کام مفلوج نہیں ہونا چاہیے۔احتجا ج کیلئے مخصوص مقامات مختص کرنے اور مظاہرین کو ریڈزون میں داخلے سے روکنے کیلئے اقدامات بھی پلان میں شامل ہونگے۔وزرات داخلہ سیکیورٹی کیلئے پنجاب حکومت سے بھی مشاورت کرے گی

مزید : صفحہ اول