کالعدم تنظیموں کے 10ارب 21کروڑ روپے بحق سرکار ضبط ، 70سے زائد مقدمات درج

کالعدم تنظیموں کے 10ارب 21کروڑ روپے بحق سرکار ضبط ، 70سے زائد مقدمات درج

لاہور(رپو ر ٹ : محمد یو نس با ٹھ) سٹیٹ بنک آف پاکستان نے کالعدم تنظیموں کے مختلف بینکوں میں موجود 126 اکاؤنٹس کو منجمند کر دیا ہے جبکہ اکاؤنٹس میں پڑے 10 ارب 21کروڑ روپے بحق سرکار ضبط کر لئے گئے ہیں۔ انسداد دہشتگردی کے لئے مرتب کردہ قومی ایکشن پلان پر عمل درآمد سے متعلق وزارت داخلہ کی حساس دستاویزات کے مطابق وفاق اور صوبے اپنے اپنے دائرے میں رہ کر دہشت گردوں کے گرد گھیرا تنگ کر رہے ہیں ۔ معلو م ہوا ہے کہ وفاقی تحقیقاتی ادارے نے سٹیٹ بینک کے تعاون سے سرمائے کی غیر قانونی ترسیل کے70سے زائدمقدمات درج کئے ہیں جبکہ 99 مشتبہ افراد کو گرفتار کر کے ان سے 8کروڑ روپے وصول کئے گئے ہیں، کالعدم تنظیموں کے مختلف بینکوں میں موجود 126 اکاؤنٹس کو منجمند کر دیا گیا ہے۔ جبکہ اکاؤنٹس میں پڑے 10 ارب 21کروڑ روپے بحق سرکار ضبط بھی کر لئے گئے ہیں۔ذرا ئع نے دعو ی کیا ہے کہ سٹیٹ بنک آف پاکستان نے کالعدم تنظیموں کے مختلف بینکوں میں موجود اکاؤنٹس کو منجمند کر دیا ہے جبکہ اکاؤنٹس میں پڑے ار بو ں روپے بحق سرکار ضبط کر لئے گئے ہیں۔ ملک بھر میں ڈیڑھ سال سے جاری جرائم پیشہ افراد کے خلاف آپریشن میں ٹارگٹ کلنگ، قتل و غارت، بھتہ خوری، ڈکیتیوں میں تو کمی واقع ہوئی ہے۔پنجاب میں عسکریت پسندی کے خاتمے کے لئے خصوصی پروگرام مرتب کئے گئے ہیں، انتہا پسندی کی روک تھام کے لئے نوجوانوں کو قرضہ دینے کے لئے ایک پراجیکٹ کے تحت تربیت بھی دی جائے گی جبکہ کاروبار شروع کرنے کے لئے نرم شرائط پر قرضے بھی دئیے جائیں گے۔ انسداد دہشتگردی کے لئے مرتب کردہ قومی ایکشن پلان پر عمل درآمد سے ۔ دستاویز کے مطابق ملک میں فرقہ وارانہ تنظیموں سے تعلق رکھنے والے شیڈول میں شامل افراد کا ڈیٹا اکٹھا کیا جا رہا ہے جبکہ فرقہ وارانہ تشدد کے واقعات میں ملوث دہشتگردوں کے مقدمات کی نشاندہی تیزی سے جاری ہے تا کہ انہیں سپیڈی کورٹس میں بجھوایا جا سکے۔ ایپکٹس کمیٹیاں نامی گرامی دہشتگردوں کے مقدمات کی فہرست مرتب کرنے میں مصروف عمل ہیں تا کہ تحفظ پاکستان ایکٹ 2013 کے تحت ان پر مقدمات چلائے جا سکیں۔ فرقہ وارانہ تنظیموں کو فنڈنگ کے ذرائع معلوم کرنے کے لئے سٹیٹ بینک تیزی سے کام کر رہا ہے۔ دہشت گردوں کے اکاؤنٹس کی نگرانی کیلئے صوبوں میں خصوصی سیل قائم کئے گئے ہیں۔ وزارت انفارمیشن و ٹیکنالوجی اور پی ٹی اے انٹرنیٹ پر مشتبہ سر گرمیوں کی نگرانی کے لئے طریقہ کار مرتب کرنے میں مصروف ہیں۔ وزرت داخلہ کے ذرائع کے مطابق کراچی میں 35937 جرائم پیشہ افراد کو گرفتار کیا گیا ہے۔

مزید : صفحہ اول