بابا فرید گنج شکر کے عرس کی تقریبات عروج پر ڈیڑھ لاکھ زائرین ، بہشتی دروازے سے گزرے

بابا فرید گنج شکر کے عرس کی تقریبات عروج پر ڈیڑھ لاکھ زائرین ، بہشتی دروازے ...

 پاکپتن(نامہ نگار)حضرت بابا فریدالدین مسعود گنج شکرؒ کے بہشتی دروازہ کے دوسرے روز دیڑھ لاکھ سے زائد زائرین نے بہشتی دروازے سے گرزنے کی سعادت حاصل کی ۔ متعدد مقامات پر پولیس کا پیدل زائرین پر لاٹھی چارج بھی دیکھنے میں آیا۔ بوڑھے زائرین سمیت متعدد افراد پولیس کے لاٹھی چارج سے زخمی ہو گئے ۔ نئی انتظامیہ لاکھوں زائرین کو کنٹرول کرنے میں مشکلات سے دوچار علاوہ ازیں گزشتہ روز وزیر اعلی پنجاب کی کیبنٹ کمیٹی براے محرم الحرام کے ممبران صوبائی وزیر قانون رانا ثناء اللہ ،ترجمان حکومت زعیم قادری ،آئی جی پنجاب مشتاق سکھیرا ، ہوم سیکرٹری اعظم سلیمان نے پاک پتن میں محرم الحرام اور عرس کے سیکورٹی وانتظامی امور کا جائزہ لیا تفصیلات کے مطابق بر صغیر پاک وہند کے عظیم صوفی بزرگ اور پنجابی زبان کے پہلے عظیم شاعر حضرت بابا فرید الدین مسعود گنج شکرؒ کی عرس کی تقریبات عروج پر پہنچ چکی ہیں عرس مُبارک کے بارویں روز اور بہشتی دروازہ کے دوسرے روز سجادہ نشین درگاہ بابا فرید ؒ دیوان مودود مسعود چشتی فاروقی ،ولی عہد سجادہ نشین دیوان احمد مسعود چشتی فاروقی نے بہشتی دروازہ کی قفل کشائی کی بہشتی دروزاہ کے دوسرے روز دیڑھ لاکھ کے قریب زائرین نے حق فرید یافرید کے نعرے بلند کرتے ہوئے بہشتی دروازہ گزرنے کی سعادت حاصل کی دوسری طرف انتظامیہ اور سیکیورٹی کا جائزہ لینے کیلئے صوبائی وزیر قانون رانا ثناء اللہ ،ترجمان حکومت زعیم قادری ،آئی جی پنجاب مشتاق سکھیرا ،نے پاکپتن کا دورہ کیا اس موقع پر ضلعی افسران نے ممبران کیبنٹ کمیٹی کو عرس بابا فرید الدین اور محرم الحرام کے مکمل سیکیورٹی وانتظامی صورتحال کی بریفننگ دی۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر