سری لنکن ٹیم پر حملے کا ماسٹر مائنڈ قاری اجمل افغان فورسز کے حملے میں مارا گیا

سری لنکن ٹیم پر حملے کا ماسٹر مائنڈ قاری اجمل افغان فورسز کے حملے میں مارا ...
سری لنکن ٹیم پر حملے کا ماسٹر مائنڈ قاری اجمل افغان فورسز کے حملے میں مارا گیا

  

لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک )سری لنکن ٹیم پر حملے کا ماسٹر مائنڈ قاری اجمل پاک افغان سرحد پر افغانستان کی فوج کے ساتھ جھڑ پ میں مارا گیا۔نجی نیوز چینل دنیا نیوز کے مطابق افغانستان میں پاک افغان سرحدی علاقے پکتیکا سروبی میں افغان نیشنل آرمی نے دہشت گردوں کے خلاف کارروائی کی جس میں سری لنکن ٹیم پر حملے کا ماسٹر مائنڈ قاری اجمل چار ساتھیوں سمیت مارا گیا ۔قاری اجمل کا تعلق پنجاب سے تھا جو سری لنکن ٹیم پر حملے کے بعد افغانستان فرار ہو گیا تھا ۔قاری اجمل کے کالعدم تنظیم سے تعلقات تھے جن کے ساتھ مل کر وہ پاکستان اور افغانستان میں دہشت گردی کی کارروائیوں میں ملوث تھا ۔

یمن میں نماز جنازہ پر بمباری،160افراد ہلاک، اہم باغی کمانڈر بھی شامل

واضح رہے کہ 4مارچ 2009کو 12دہشت گردوں نے قذافی اسٹیڈیم کے قریب لبرٹی چوک پر سری لنکن ٹیم کی گاڑی کو اس وقت نشانہ بنا یا تھا جب وہ ہوٹل سے میچ کھیلنے کے لیے اسٹیڈیم میں آرہے تھے ۔اس حملے میں چھ سری لنکن کھلاڑی زخمی بھی ہوئے تھے تاہم گاڑی کے ڈرائیور نے جان پر کھیل کر حملہ آورو ں کے مقاصد ناکام بنا دئیے تھے ۔اس حملے کے بعد بھارت نے بین الاقوامی سطح پر لابنگ کر کے پاکستان سے انٹر نیشنل کرکٹ کو بند کر ا دیا تھا ۔

مزید : قومی