اس طریقے سے ہیکرز آپ کی واٹس ایپ کو اپنے کنٹرول میں کر سکتے ہیں ۔۔۔ سکیورٹی ماہرین نے خبردار کر دیا

اس طریقے سے ہیکرز آپ کی واٹس ایپ کو اپنے کنٹرول میں کر سکتے ہیں ۔۔۔ سکیورٹی ...
اس طریقے سے ہیکرز آپ کی واٹس ایپ کو اپنے کنٹرول میں کر سکتے ہیں ۔۔۔ سکیورٹی ماہرین نے خبردار کر دیا

  

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) انٹرنیٹ صارفین ابھی فیس بک کی تاریخ کی سب سے بڑی ہیکنگ کی واردات کے خوف سے نہیں نکلے تھے کہ اب سائبر سکیورٹی ماہرین نے واٹس ایپ کے حوالے سے بھی انتہائی خوفزدہ کر دینے والی خبر سنا دی ہے۔ میل آن لائن کے مطابق ماہرین کا کہنا ہے کہ فیس بک کے ’ویو ایز‘ (View As)نامی فیچر کی طرح واٹس ایپ ’وائس میل اِن باکس‘ کے ذریعے بھی ہیکرز کسی بھی صارف کے واٹس ایپ تک رسائی حاصل کر سکتے ہیں۔Nakedسکیورٹی کمپنی کے ماہرین کے مطابق اس طریقے کے تحت ہیکرز کسی بھی صارف کے فون نمبر کے ذریعے اپنے فون میں واٹس ایپ انسٹال کرنے کی کوشش کرتے ہیں، جس پر واٹس ایپ تصدیق کے لیے اس صارف کے نمبر پر 6اعداد پر مشتمل کوڈ میسج کے ذریعے بھیجتا ہے۔ ہیکرز یہ کام عموماً رات کے وقت کرتے ہیں جب صارف سو رہا ہوتا ہے اوراپنا فون جلدی چیک نہیں کرتا۔“

ماہرین مزید بتاتے ہیں کہ” چونکہ واٹس ایپ فون کال کے ذریعے بھی کوڈ فراہم کرنے کا آپشن دیتا ہے، چنانچہ ہیکرز فون کال کے ذریعے کوڈ حاصل کرنے کی ریکوئسٹ کرتے ہیں۔ صارف چونکہ وہ کال ریسیو نہیں کرتا لہٰذا وہ ان کے وائس میل ان باکس میں محفوظ ہو جاتی ہے۔یہاں ہیکرز اس سکیورٹی خامی کا فائدہ اٹھاتے ہیں جو اکثر ٹیلی کمیونیکیشن نیٹ ورکس میں پائی جاتی ہے۔ نیٹ ورکس اپنے صارفین کوکال کرنے اور اپنے وائس میل ان باکس تک رسائی کے لیے ایک عمومی فون نمبر دیتے ہیں۔ صارف کو اس عمومی نمبر کے ذریعے ان باکس تک رسائی کے لیے ایک 4اعداد پر مشتمل کوڈ کی ضرورت ہوتی ہے جو عام طور پربائی ڈیفالٹ 0000یا پھر 1234ہوتا ہے۔ ہیکرز یہ دونوں کوڈ ٹرائی کرتے اور اس صارف کے وائس میل میں داخل ہو کر واٹس ایپ کا کوڈ چرا کر اسے اپنے فون میں ڈالتے اوریوں اس صارف کا واٹس ایپ مکمل طور پر ان کے کنٹرول میں چلا جاتا ہے۔“ہیکرز کے اس طریقہ واردات کی سب سے پہلے رین بار زک نامی ویب ڈویلپر نے نشاندہی کی تھی، جو اس وقت اس قدر عام ہو چکا ہے کہ اسرائیل سمیت کئی ممالک اپنے شہریوں کو اس حوالے سے متنبہ کر چکے ہیں۔

مزید : سائنس اور ٹیکنالوجی