سپیکر کے زیرصدارت پبلک اکاؤنٹس کمیٹی کا اجلاس: 2012-13میں 17.47ملین کی لکڑی کاریکارڈ غائب 

سپیکر کے زیرصدارت پبلک اکاؤنٹس کمیٹی کا اجلاس: 2012-13میں 17.47ملین کی لکڑی ...

  

پشاور(نیوزرپورٹر)سپیکر خیبرپختونخوااسمبلی مشتاق احمد غنی کی زیر صدارت صوبائی اسمبلی سیکرٹریٹ میں محکمہ جنگلات،ماحولیات اور جنگلی حیات خیبرپختونخواکے سال 2015-16کے آڈٹ پیراز کے حوالے سے پبلک اکانٹس کمیٹی کا اجلاس منعقدہوا۔اجلاس میں ممبران صوبائی اسمبلی ارباب وسیم حیات،فضل شکوراور ادریس خان خٹک نے شرکت کی جبکہ محکمہ جنگلات،ماحولیات کی جانب سے ایڈیشنل سیکرٹری شریک ہوئے۔ڈیویژنل فارسٹ آفیسرچترال کے سال 2012-13میں 17.47ملین کی لکڑی کو ریکارڈ سے غائب کیا گیا۔اس ضمن میں کمیٹی کو بتایا گیا کہ فارسٹ آرڈیننس 2002کے مطابق غیر قانونی کٹائی میں استعمال ہونے والی تمام اشیا بشمول مال ڈھونے والے جانور اورٹرانسپورٹ بھی حکومت ضبط کر لیتی ہے جبکہ اس کیس میں ریکارڈ سے متعلقہ اشیا کو سرے سے غائب کر دیا گیا۔کمیٹی نے محکمہ کو انکوائری کرانے اور ذمہ دار افراد کے خلاف محکمانہ کارروائی کا حکم دے دیا۔دفترڈی ایف اوسرن مانسہرہ میں سال 2014-15میں لکڑی کے فروخت کیلئے رکھی گئی قیمت مارکیٹ ریٹ سے کافی کم رکھی گئی جس سے خزانے کو 5.13ملین کا نقصان اٹھانا پڑا۔کمیٹی نے معاملے کو پی اے سی کی ذیلی کمیٹی کے حوالے کردیا تاکہ تفصیلی تحقیقا ت ہواور رپورٹ پیش کرنے کی ہدایات جاری کی۔دفترڈی ایف او اگرورتناول مانسہرہ میں سال 2013-14میں جرمانوں کی مد میں 3.42ملین کی بے قاعدگی نوٹ کی گئی جس پر کمیٹی نے معاملے کو ذیلی کمیٹی میں تحقیقات کے لئے بیھج دیا جہاں ذمہ داروں کا تعین ہوگا اور ان کے خلاف کارروائی تجویزکی جائے گی۔ڈی ایف او سرن مانسہرہ کے حوالے سے سال 2014-15میں مختلف پرائیویٹ نرسریز کو بلین ٹری سونامی پراجیکٹ کیلئے پودے مہیاکرنے کے حوالے سے معاوضوں کی ادائیگیوں اور ان ادا ئیگیوں کے برخلاف پودوں کی نسبتا کم فراہمی کے حوالے سے بے قاعدگی نوٹ کی گئی اس ضمن میں محکمہ نے کمیٹی کو بتایا کہ جن جن نرسریوں کو معاوضہ دیا گیا ان میں سے سوائے تین نرسریوں کے باقی نرسریوں نے پودوں کی مکمل فراہمی ممکن بنائی جبکہ ان تین نرسریوں کے خلاف قانونی کارروائی کی جارہی ہے۔کمیٹی نے محکمہ کو ان نرسریوں کے خلاف فوری قانونی کارروائی کرنے اوران سے معاوضے کی واپسی یقینی بنانے کے احکامات جاری کئے۔ڈی ایف او شیرنگل،دیر کوہستان کے حوالے سے سال 2014-15میں فارسٹ ڈیویلپمنٹ کارپوریشن کے ذمے بقایا 18.88ملین کی رقم کے وصول نہ کروانے کے حوالے سے کمیٹی نے محکمہ کو احکامات جاری کئے کہ اس حوالے سے تحقیقات کروائی جائیں اور مطلوبہ رقم کی فوری واپسی کے انتظامات کئے جائیں۔ڈی ایف او کنھارواٹر شیڈ مانسہرہ کے حوالے سے پیرا کو کلیئر کردیاگیا۔ڈی ایف او سرن مانسہرہ کے حوالے سے ایک اور پیرا کو مطلوبہ ریکارڈ کی تصدیق کے ساتھ مشروط کردیا گیا جوکہ غیر قانونی طور پر کاٹے گئے درختوں کی مقامی افرادکو سپرداری پر دینے کے حوالے سے تھی۔چیئرمین نے محکمہ ہذا کی بغیرتیاری اور ضروری دستاویزات کے پی اے سی میں شرکت پر برہمی اور بے اطمینانی کااظہارکیا۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -