شبقدر، ٹیکسٹ بورڈ کا سرکاری کتب ڈیلرز کو فروخت کرنے کا انکشاف 

شبقدر، ٹیکسٹ بورڈ کا سرکاری کتب ڈیلرز کو فروخت کرنے کا انکشاف 

  

شبقدر(تحصیل رپورٹر)  ٹیکسٹ بورڈ کا سرکاری کتب ڈیلرز کو فروخت کرنے کا انکشاف۔ سرکاری تعلیمی اداروں کے طلباء کو کتب کی دستیابی میں مشکلات کا سامنا ہائی اور ہائر سکنڈری درجے کے کتب بازار میں نایاب۔تبدیلی سرکاری 6ماہ کے طویل بندش کے باوجود طلباء کو کتب کی فراہمی میں ناکام۔ تفصیلات کے مطابق اوپن مارکیٹ میں درسی کتب کی شدید قلت پیدا ہونے کے ساتھ ساتھ ٹیکسٹ بک بورڈ نے چارسدہ اور مردان کے ایجنسی مالکان کو NOT FOR SALEکی کتابیں فروخت کرنا شروع کردیا ہے دونوں شہروں کے مارکیٹس میں یہی کتابیں فروخت کی جارہی ہے اس کے علاوہ مارکیٹ اور سرکاری تعلیمی اداروں میں نہم ودہم کی اسلامیات لازمی سال دوم کی اردو، سال اول کی ریاضی وغیرہ ناپید ہیں جس کی وجہ سے طلباء وطالبات شدید زہنی کوفت کا شکار ہے طلباء نے ہمارے نمائندے کو بتایا کہ اپریل سے اگست تک تعلیمی ادارے بند رہے مگر تبدیلی سرکار کی نااہلی کا اندازہ لگائے کہ6ماہ میں بھی درسی کتب فراہم نہ کرسکا تو تعلیمی انقلاب کے دعوے کس منہ سے کررہے ہیں۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -