پی ڈی ایم اتحاد ٹوٹنے پر بھی جوا شروع، پیپلزپارٹی فیورٹ قرار

  پی ڈی ایم اتحاد ٹوٹنے پر بھی جوا شروع، پیپلزپارٹی فیورٹ قرار

  

لاہور(ج، ایف) اپوزیشن اتحاد پر شرطیں لگ گئیں اور ملک بھر میں اس پر جوا شروع ہو گیا ہے جوا اتحاد ٹوٹنے اور قائم رہنے پر لگایا جا رہا ہے،، زیادہ ریٹ پیپلزپارٹی کے اتحاد سے آؤٹ ہونے پر لگایاجا رہا ہے، 70 پیسے اتحاد ٹوٹنے اور 30 پیسے اتحاد قائم رہنے پر لگایا جا رہا ہے۔ذرائع کے مطابق کرکٹ کے بعد ملک کے طول و عرض میں ملک کی سیاست پر بھی جوا شروع ہوگیا ہے۔ جوار یے اپوزیشن جماعتوں کے اتحاد کے ٹوٹنے کو زیادہ اہمیت دے رہے ہیں جس میں پیپلز پارٹی کو آؤٹ ہونے کے لیے فیورت اقرار دیا جا رہا ہے۔ لاہور کے سب سے بڑے بکی کا دعویٰ ہے کہ زیادہ لوگ اپوزیشن اتحاد ٹوٹنے پر پیسے لگا رہے ہیں۔ پیپلزپارٹی کا ریٹ اس لیے زیادہ نکالا گیا ہے کہ وہ اپوزیشن اتحاد توڑنے میں مرکزی کردار ادا کرے گی۔ سیاست پر جوا شروع ہونے کا مرکز لاہور،کراچی،راولپنڈی،اسلام آباد، فیصل آباد،ڈی جی خان اور میانوالی ہیں جہاں کے جوار یے دھڑا دھڑ بکنگ کر رہے ہیں۔ جوار یے نے بتایا کہ اپوزیشن اتحاد زیادہ دیر نہیں چل سکے گا سب سے پہلے پیپلزپارٹی الگ ہوگی کیونکہ پیپلزپارٹی کے حکومت اور اسٹبلشمنٹ کے بیک ڈور رابطے ہیں اور آخر میں مسلم لیگ ن کو تن تنہا تحریک چلانا پڑے گی جبکہ اپوزیشن اتحاد دسمبر سے آگے چلتا ہوا نظر نہیں آ رہا۔ راولپنڈی کے ایک معروف جوار یے نے بتایا کہ پیپلز پارٹی کے کو چیئرمین آصف زرداری آئندہ باری کیلئے اتحاد چھوڑ سکتے ہیں وہ اپنی پیپلز پارٹی کو پرو اسٹیبلشمنٹ متعارف کروانے کے چکر میں ہیں اور وہ میاں نواز شریف اور مولانا فضل الرحمان کے لئے کسی صورت اپنے بیٹے کی سیاست پر اینٹی اسٹیبلشمنٹ لیڈر کی چھاب نہیں لگوائیں گے۔ اگر آصف زرداری کو آئندہ حکومت میں اہم کردار اور خصوصاً سندھ حکومت کی یقین دہانی مل گئی تو وہ اپوزیشن کے موجودہ اتحاد سے نہ صرف خود کو الگ کر لیں گے اگر ایسا نہ بھی کرسکے تو اس اپوزیشن اتحاد کو کھوکھلا ضرور کر دیں گے۔

جوا

مزید :

صفحہ اول -