ملک عبدالرحمن کھر کی پولیس کے  خلاف درخواست، ڈی پی او، ایس  ایچ او سنانواں، کوٹ ادو کو پٹشنر اور  اسکی فیملی کوہراساں نہ کرنیکی ہدایت

  ملک عبدالرحمن کھر کی پولیس کے  خلاف درخواست، ڈی پی او، ایس  ایچ او سنانواں، ...

  

  ملتان (خصو صی رپورٹر)ہائیکورٹ ملتان بنچ کے جج جسٹس سردار محمد سرفراز ڈوگر نے سابق ایم این اے اور معروف سیاست دان ملک غلام مصطفی کھر کے صاحبزادے (بقیہ نمبر37صفحہ6پر)

عبدالرحمن کھر کو پولیس کی جانب سے بار بار ہراساں و پریشان کرنے  اور چھاپوں کے دوراں انتہایی غیر مناسب رویہ اختیار کرنے کے خلاف رٹ درخواست کی سماعت کرتے ہوئے ڈی پی او مظفرگڑھ حسن اقبال، ایس ایچ او سنانواں عصمت عباس اور ایس ایچ اوتھانہ سٹی کوٹ ادو کو حکم دیا کہ وہ اس بات کی یقین دہانی کرائیں کہ وہ آئندہ پٹیشنر اور اس کی فیملی کو ہراساں و پریشان نہیں کریں نگے اور ان ہدایات کے ساتھ رٹ درخواست نمٹادی ہے۔ قبل ازیں فاضل عدالت میں عبدالرحمن کھر نے ملک محمد لطیف کھوکھر کے ذریعے رٹ دائر کرتے ہوئے موقف اختیار کیا تھا پولیس والوں نے 30 ستمبر کو پولیس نے بلال کھر کو پکڑنے کے لئے ریڈ کیا جس پر 2014 میں 302 کا مقدمہ درج تھا۔تھانہ سنانواں پولیسملزم کے سوتیلے بھائی و پٹشنر کو غیر قانونی پکڑ کر لے گئے تھے عبدالرحمن کھر کے وکلا نے کہا 2016 میں اسی طرح کا واقعہ پیش آیا جس میں پٹشنر کو پولیس لے گئی تھی جس کی ایف آئی آر علاقہ مجسٹریٹ نے خارج کردی تھی۔ اب پولیس پھر ہراساں کررہی ہے جس سے باز رہنے کا حکم دیا جائے۔

ہدایت

مزید :

ملتان صفحہ آخر -