جعلی اپ گریڈیشن، ہیلتھ ملازمین کا سیکرٹری کا لیٹر قبول کرنے سے انکار

  جعلی اپ گریڈیشن، ہیلتھ ملازمین کا سیکرٹری کا لیٹر قبول کرنے سے انکار

  

 گوگڑاں (نمائندہ پاکستان) محکمہ صحت کے افسران  نے سیکرٹری ہیلتھ پنجاب کے لیٹر کو بھی ماننے سے انکار کردیا ہے عرصہ دراز سے  محکمہ صحت کے بگڑے ہوئے  ملازمین تبدیلی کے دور میں بھی محکمہ صحت کیلئے بدنامی کا باعث بننے لگے سابق سی ای او ہیلتھ طارق گیلانی کے(بقیہ نمبر24صفحہ6پر)

 دور میں ہونے والی جعلی بوگس اب گریڈیشن جس کو انے والے سی ای او ڈاکٹر افتخار گجر نے تفصیلی جائزہ لیتے ہوئے جعلی قرار دیتے ہوئے فوری طور پر سابق آرڈر کو کیسنل کرتے ہوئے تمام ملازمین کو ریوارڈ کرتے ہوئے محکمہ خزانہ کو ریکوری کا حکم جاری کیا مگر  پھر مافیاز نے مل کر سب کاروائیوں کو رکوا دیا  سکیل کینسل والی کاروائی پر عملدرآمد نہیں ہونے دیا لودھراں میں تین سال سے سرکاری بجٹ بک میں کوئی بھی اب گرڈیشن کے سکیل نہیں ڈالے گئے کیوں کہ سرکاری بجٹ بک بنانے والے تین سالوں میں  تینوں ڈپٹی ڈائریکٹر بجٹ آفیسروں نے اس اب گرڈیشن کو جعلی کہتے ہوے سرکاری بجٹ بک میں جعلی بوگس سکیل کے ساتھ بجٹ بک سکیل ڈالنے سے انکار کرتے چلے جارہے موجودہ ڈپٹی ڈائریکٹر نے بھی اس سالانہ بجٹ بک میں  جعلی سکیل نہیں ڈالے کیوں کہ یے تمام اب گریڈیشن بوگس ہے راتوں رات من مانی پیسے لیتے ہوئے مافیاز نے 10 سال ماضی سے  بوگس اب گرڈیشن کردی حیران کن امر  ہے کہ ضلعی افسران اتنی بڑی کرپشن دو نمبری کے باوجود بھی خاموش تماشائی بنے ہوئے ہیں اس تمام تر دونمبری پر کاروائی نہ ہونے کی وجہ  سی او ہیلتھ  کے ہیڈکلرک. ہیں کیونکہ یے تمام بوگس اب گریڈیشن کی ڈیل اس کی ہاتھوں ہوئی تھی اب اس لیے مافیاز نے اس ہیڈکلرک کو سی ای او افس  میں  ہی تعینات کرا رکھا تاکہ اب گرڈیشن کینسل نہ ہو اس لیے تین ماہ قبل سیکرٹری ہیلتھ پنجاب نے ایک بار پھر سی ای او ہیلتھ لودھراں کو لیٹر لکھتے ہوئے فوری طور پر جعلی بوگس اب گریڈیشن کو ریوارڈ کرتے ہوئے ریکوری ڈالنے کا کہا مگر تمام مافیاز نے اس لیٹر پر تین ماہ گرزنے کے باوجود عملدرآمد نہیں ہونے دیا ۔ 

انکار

مزید :

ملتان صفحہ آخر -