رینجرز کو ’مشکل علاقوں‘ میں آپریشن میں مدد کیلئے بلایاجارہاہے، ضرورت پڑی تو قیام میں توسیع ہوگی : رانا ثنا ءاللہ

رینجرز کو ’مشکل علاقوں‘ میں آپریشن میں مدد کیلئے بلایاجارہاہے، ضرورت پڑی ...
رینجرز کو ’مشکل علاقوں‘ میں آپریشن میں مدد کیلئے بلایاجارہاہے، ضرورت پڑی تو قیام میں توسیع ہوگی : رانا ثنا ءاللہ

  


لندن (مانیٹرنگ ڈیسک) برطانوی میڈیا کے مطابق صوبائی وزیرقانون رانا ثناءاللہ نے پنجاب میں رینجرز بلائے جانے کی تصدیق کردی اور بتایاکہ رینجرز کو مخصوص مدت کیلئے دہشتگردوں اور کالعدم تنظیموں کیلئے آپریشن کیلئے محدود مدت کیلئے بلایا جارہاہے تاہم ضرورت پڑنے پر قیام میں توسیع کی جاسکتی ہے ، پنجاب میں پہلے ہی رینجرز موجود ہے ، ان کی مدد لینے کافیصلہ کیاگیا۔ اُنہوں نے واضح کیاکہ پنجاب میں سندھ کی طرز کے رینجرز کو اختیارات حاصل نہیں ہوں گے ، صرف ضرورت کے مطابق رینجرز کی مدد حاصل کی جائے گی ۔

بی بی سی کو دیئے گئے انٹرویو میں رانا ثناءاللہ نے بتایاکہ ابتدائی طورپر انسداد دہشتگردی فورس کی’بعض مشکل ‘علاقوں میں مدد کیلئے رینجرز کوصرف دو ماہ کیلئے بلایاجارہاہے ، اس سے پہلے بھی رینجرز کو پنجاب میں بلایاجاچکاہے ، یہ پہلی بار نہیں ، اس سے پہلے راجن پور میں ڈاکوﺅں کیخلاف آپریشن کے لیے بھی رینجرز کو بلایاجاچکاہے ۔

رانا ثناءاللہ نے کہاکہ خفیہ اطلاعات پر رینجرز دہشتگردوں اور کالعدم تنظیموں کیخلاف کارروائی کرے گی اور ایسا کررہی ہے لیکن اب رینجرز کی موجودگی کو مزید مربوط بنانے اور ان کی تعداد کو بڑھانے کا فیصلہ کیاگیا، کوئٹہ میں حالیہ دہشتگردی کے واقعات کے بعد یہ محسوس کیا گیا ہے کہ پنجاب میں دہشتگردوں، کالعدم تنظیموں اور ان کے سہولت کاروں کے خلاف برسر پیکار انسداد دہشتگردی کی فورس کی مدد کےلئے رینجرز کو تعینات کیا جائے۔

مزید : قومی