حج کے دوران حادثات سے بچنے کیلئے سعودی عرب نے خصوصی انتظامات کرلئے، ایک چیز ایسی متعارف کروادی کہ پوری دنیا عش عش کر اُٹھی

حج کے دوران حادثات سے بچنے کیلئے سعودی عرب نے خصوصی انتظامات کرلئے، ایک چیز ...
حج کے دوران حادثات سے بچنے کیلئے سعودی عرب نے خصوصی انتظامات کرلئے، ایک چیز ایسی متعارف کروادی کہ پوری دنیا عش عش کر اُٹھی

  


ریاض(مانیٹرنگ ڈیسک)گزشتہ سال دوران حج بھگدڑ مچنے سے سینکڑوں لوگ لقمہ اجل بن گئے تھے اور بعدازاں ان متوفین کی شناخت کے حوالے سے بھی سعودی حکومت کو سخت دشواری کا سامنا کرنا پڑا تھا۔ اس بار سعودی حکومت سے گزشتہ برس جیسی صورتحال سے بچنے کے لیے الیکٹرانک بریسلیٹ (کڑے) متعارف کروا دیئے ہیں۔ ہر عازم ِ حج کو یہ بریسلیٹ دیا جائے گا اور اس پر لازم ہو گا کہ وہ تمام وقت اسے اپنی کلائی میں پہن کر رکھے۔ برطانوی نشریاتی ادارے کی رپورٹ کے مطابق اس بریسلیٹ میں ایک بارکوڈ ہو گا جس میں عازمِ حج کی تمام تفصیلات محفوظ ہوں گی۔ یہ بریسلیٹ ایک ایپلی کیشن کے ذریعے سمارٹ فون سے بھی منسلک کیا جا سکے گا۔ اس ایپلی کیشن کا نام ”حج بریسلیٹ“ (Hajj Bracelet)ہے۔

سعودی حکومت کا قربانی کی رقم نقد وصول کرنے والوں کو گرفتار کرنے کا فیصلہ، گائے کی قربانی روکدی گئی

سعودی وزارت حج کے عہدیدار عیسیٰ رواس نے اس بریسلیٹ کی وضاحت کرتے ہوئے بتایا ہے کہ ”اگر آپ سمارٹ فون کی ایپلی کیشن کھول کر بریسلیٹ پر دیا گیا بارکوڈ اس کے سامنے کریں گے تو آپ کو اس عازمِ حج کی تمام تر تفصیلات سکرین پر نظر آ جائیں گی۔ ان تفصیلات میں اس کی تصویر، نام، عمر، قومیت وغیرہ شامل ہوں گی۔ اگر کسی عازمِ حج کو کوئی نقصان پہنچتا ہے یا وہ گم ہو جاتا ہے تو یہ بریسلیٹ ایسی کسی بھی صورت میں بہت معاون ثابت ہو گا۔ برطانوی نشریاتی ادارے نے رپورٹ میں بتایا ہے کہ اس سال سعودی حکومت اپنی ہر صلاحیت کو بروئے کار لا رہی ہے تاکہ حج کے دوران گزشتہ سال کی طرح کوئی حادثہ رونما نہ ہو سکے۔ بریسلیٹ کے علاوہ اس سال سکیورٹی بھی انتہائی سخت کی جا رہی ہے اور عازمین حج کی جگہ جگہ چیکنگ ہو گی۔

مزید : عرب دنیا