جعلی بھرتی کیس، اکاؤنٹس آفیسر اور 2آڈیٹرز معطل کر دیئے گئے

جعلی بھرتی کیس، اکاؤنٹس آفیسر اور 2آڈیٹرز معطل کر دیئے گئے

  



ملتان(نمائندہ خصوصی) پنجاب کانسٹیبلری پنجاب ملتان بٹالین میں کروڑوں روپے مالیت کا فراڈ کیس سامنے آنے پر اکاؤنٹس آفس ملتان کے ڈسٹرکٹ اکاؤنٹس آفس بشیر احمد ، سینئر آڈٹ مدثر رضا دریشک ، طاہر بخاری کو معطل کر دیا گیا تینوں ملزمان کی معطلی کے بعد اکاؤنٹنٹ جنرل پنجاب(بقیہ نمبر12صفحہ12پر )

اور فنانس ڈیپارٹمنٹ کی 2 ٹیمیں انکوائری کیلئے ملتان پہنچ گئیں معطلی کا مراسلہ موصول ہونے کے بعد ڈسٹرکٹ اکاؤنٹس افسران سکندر بیگ مرزا دونوں آڈیٹرز کی اسائمنٹ واپس لینے پر مجبور ہوگئے اسائنمنٹس کی واپسی کے بعد طاہر بخاری نے مزید کرپشن کے ثبوت سامنے آنے سے روکنے کیلئے اپنے گروپ ارکان کے نام سکندر بیگ مرزا کو پیش کر دیئے اور تمام اسائنمنٹس اسد مگسی، میاں واجد اور نادر مگسی میں تقسیم کرنے کیلئے لابنگ شروع کر دی کروڑوں روپے کے فراڈ میں ملوث دونوں آڈیٹرز نے سکندر بیگ مرزا پر واضح کر دیا کہ ان سے واپس کی گئیں اسائنمنٹس صرف اور صرف اسد مکی ، میاں واجد اور نادر مگسی میں تقسیم کی جائیں بصورت دیگر ڈسٹرکٹ اکاؤنٹس آفس کو بھیانک صورتحال کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے دریں اثناء انکوائری آفیسر محمد وسیم نے گذشتہ روز ایک مرتبہ پھر ڈسٹرکٹ اکاؤنٹس آفس گئے اور کروڑوں روپے مالیت کے فراڈ کا مطلوبہ دستاویزات لیکر چلے گئے دوسری جانب اکاؤنٹ جنرل پنجاب کی ہدایات پر ایڈیشنل اکاؤنٹنٹ جنرل پنجاب اشفاق ڈوگر اور ڈپٹی انسپکٹر ٹریثری اعتزاز سندھو پر مشتمل انکوائری ٹیم نے ابتدائی کارروائی مکمل کرلی اور اکاؤنٹنٹ جنرل پنجاب کو رپورٹ بھی پیش کر دی دریں اثناء پنجاب کانسٹیبلری کروڑوں روپے کے فراڈ کے ملزمان ڈسٹرکٹ اکاؤنٹس آفیسر بشیر احمد سینئر آڈیٹرز طاہر بخاری احمد مثر رضا دریشک کے اپنے آپ کو بچانے کیلئے یہ مؤقف اپنا رکھی ہے کہ تفتیش کا عمل جانبدارانہ ہے کروڑوں روپے کی بوگس بلنگ ہوئی متعلقہ ڈیپارٹمنٹ ایس پی خود ذمہ دار ہے اور کانسٹیبلری میں کروڑوں روپے کے غبن اور فراڈ کے مقدمہ میں ملوث ڈسٹرکٹ اکاؤنٹس آفس کا ملازم قرار دیا جانے والا اہل کار عدنان عام شہری نکلا بتایا جاتا ہے عدنان طاہر بخاری اور مدثر رضا دریشک کیلئے ٹاؤٹ کا کام کرتا تھا۔

اکاؤنٹس آفس

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...