کوئٹہ ، کوئلے کی کان میں زہریلی گیس بھرنے سے 4کار کن جاں بحق

کوئٹہ ، کوئلے کی کان میں زہریلی گیس بھرنے سے 4کار کن جاں بحق

  



ؐکوئٹہ(آن لائن)بلوچستان کے صوبائی دارالحکومت کوئٹہ کے نواحی علاقے سنجدی میں واقع ایک کوئلے کی کان میں زہریلی گیس بھرنے کے نتیجے میں 4 کارکن جاں بحق ہوگئے۔ریسکیو ذرائع کے مطابق جمعے کی صبح جب سنجدی میں واقع کوئلے کی یہ کان زہریلی گیس سے بھری اس وقت دو کان کن بیہوش تھے۔ریسکیو ورکرز نے مردہ اور بیہوش کان کنوں کو طبی امداد کی فراہم کے لیے قریبی ہسپتال منتقل کیا۔زہریلی گیس سے متاثر ہونے والے تمام مزدوروں کا تعلق سوات سے ضلع شانگلہ سے بتایا گیا۔ریسکیو ورکر نے بتایا کہ یہ کان کن ہزاروں فیٹ گہرائی میں کام کررہے تھے جب اچانک کان زہریلی گیس سے بھر گئی، جبکہ کان کنوں کے لیے کام کے حالات بھی انتہائی خراب تھے۔مزدور رہنما بخت نواب نے بتایا کہ یہاں کام کرنے والوں کو کام کرنے کا مناسب معاوضہ ملتا ہے اور نہ ہی وہ کان میں محفوظ ہوتے ہیں۔دوسری جانب بلوچستان کے محکمہ کان کنی اور معدنیات کے حکام بھی واقعے کے بعد جائے حادثہ پہنچے اور پوچھ گچھ کی۔واضح رہے کہ کوئلے کی کانوں میں حفاظتی انتظامات نہ ہونے کی وجہ سے اس طرح کے ناخوشگوار واقعات اکثر پیش آتے رہتے ہیں اور یہاں کام کرنے والے مزدور و کان کن جان سے ہاتھ دھو بیٹھتے ہیں۔

کان کن جاں بحق

مزید : کراچی صفحہ اول