پنچائیتی فیصلہ‘ خاتون کے بال کاٹنے پر والد‘ سسر‘ بھائی گرفتار‘ سرغنہ فرار

پنچائیتی فیصلہ‘ خاتون کے بال کاٹنے پر والد‘ سسر‘ بھائی گرفتار‘ سرغنہ فرار

 ملتان، بستی ملوک(خبر نگار خصوصی،نمائندہ پاکستان)تھانہ بستی ملوک کے علاقہ منگے ہٹی کی شادی شدہ خاتون کوثر مائی گھریلوجھگڑے سے تنگ آ کر ملتان کوٹھی میں گھریلو کام کاج کرنے لگی جس پر خاتون کے اہل خانہ جس میں والد،سسر،خاوند،بھائی وغیرہ شامل ہیں اسے گھر لے آئے اور پنچائیت بنا کر اسے بد چلن قرار دے دیا پنچائیت وہاں کی سیاسی شخصیت شہزاد شاہ گیلانی،عابد نمبردار کے (بقیہ نمبر41صفحہ7پر)

ڈیرے پر ہوئی اور پنچائیت نے فیصلہ دیا کہ اس خاتون کے سر کے بال کاٹ دئیے جائیں ساتھ ہی منہ پر کالا تیل مل دیا جائے وہاں موجود افراد نے فوری پنچائیتی فیصلے پر عمل کیا اور استرے کی مدد سے خاتون کے بال کاٹ دئیے گئے واقع کی اطلاع تھانہ بستی ملوک پولیس کو ملی تو پولیس حرکت میں آئی اور چھاپہ مار کرخاتون کے سسرغلام فرید،والد حبیب،بھائی حنیف کو گرفتار کرلیا جبکہ پنچائیت کے سرغنہ ودیگر افراد فرار ہوگئے۔ اہلیان علاقہ نے بتایا کہ خاتون کا شوہر اکثر اسے مارپیٹ کا نشانہ بناتا رہتا ہے کچھ عرصہ قبل اس کے شوہر ظہور قصائی نے دونوں ٹانگیں بھی توڑ دی تھی اب بھی اسے گولی مارنا چاہتا تھا لیکن پنچائیت کی وجہ سے ایسا نہ کیا گرفتار ملزمان سسرغلام فرید،والد حبیب اور بھائی حنیف کا کہنا تھا کہ کوثر مائی کسی کے ساتھ بھاگ گئی تھی جس پر اسے یہ سزاء دی اور ہمیں اس پر کوئی شرمندگی نہیں ہے پولیس دیگر ملزمان وپنچائیتی افراد کی گرفتاری کیلئے چھاپے مار رہی ہے۔

پنچائیتی فیصلہ

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...