برطانیہ میں 177 کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتارسے دوڑتی گاڑی پولیس نے روک لی لیکن پھر تیز رفتاری کی ڈرائیور نے ایسی وجہ بتادی کہ آپ کو بھی ہنسی آجائے گی

برطانیہ میں 177 کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتارسے دوڑتی گاڑی پولیس نے روک لی لیکن ...
برطانیہ میں 177 کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتارسے دوڑتی گاڑی پولیس نے روک لی لیکن پھر تیز رفتاری کی ڈرائیور نے ایسی وجہ بتادی کہ آپ کو بھی ہنسی آجائے گی

  


لندن (ویب ڈیسک) برطانوی کاؤنٹی کیمبرج شائر میں پولیس نے کار ڈرائیور کو 177 کلو میٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے گاڑی چلانے پر پہلے گرفتار اور پھر فوری رہا کردیا گیا۔

جیونیوز کے مطابق برطانوی کاؤنٹی کیمبرج شائر کے گاؤں یاکسلے کے قریب موٹر وے پر سلور رنگ کی مرسڈیز 177 کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے جارہی تھی جس پر پولیس نے گاڑی کا پیچھا کیا اور اسے روک لیا۔پولیس کی جانب سے تیزرفتاری کی وجہ معلوم کرنے پر کار ڈرائیور نے حیران کن جواب دیا جس پر پولیس نے بھی اسے بغیر کسی جرمانے کے جانے دے دیا۔کار ڈرائیور نے پولیس کو تیز رفتاری کی وجہ ’رفع حاجت‘ کو قرار دیتے ہوئے کہا کہ اسے باتھ روم کی تلاش ہے۔مقامی پولیس نے بھی اس واقعے کو اپنے سوشل میڈیا اکاؤنٹ پر پوسٹ کیا ہے جس پر طنز و مزاح کا سلسلہ جاری ہے۔

مزید : برطانیہ


loading...