متحدہ عرب امارات میں قائم اے پی ایم ایل کے شعبہ خواتین کے زیرِ اہتمام پاکستان کے یومِ دفاع کے حوالے سے تقریب منعقد

متحدہ عرب امارات میں قائم اے پی ایم ایل کے شعبہ خواتین کے زیرِ اہتمام پاکستان ...
متحدہ عرب امارات میں قائم اے پی ایم ایل کے شعبہ خواتین کے زیرِ اہتمام پاکستان کے یومِ دفاع کے حوالے سے تقریب منعقد

  


دبئی (طاہر منیر طاہر)متحدہ عرب امارات میں قائم اے پی ایم ایل کے شعبہ خواتین کے زیرِ اہتمام پاکستان کے یومِ دفاع کے حوالے سے منعقد کی گئی ایک سادہ سی تقریب میں شرکت کر تے ہوئے خواتین نے شہداء کو خراجِ تحسین پیش کیا۔ اس موقع پر مقبوضہ کشمیر کے مظلومین کے ساتھ اظہارِ یکجہتی کا اعادہ بھی کیا گیا۔اے پی ایم ایل، خواتین ونگ کی صدر فرزانہ منصور نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے شہداء کے ورثاء کو بہترین الفاظ میں سراہا اور کہا کہ شہید کی موت دراصل قوم کی حیات ہے اور قوم ان ماوں، بہنوں اور بیٹیوں کو سلام پیش کرتی ہے جن کی قربانیوں سے پاکستان کی سلامتی مضبوط ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ ہمارے قائد سید پرویز مشرف نے بھی ہمیشہ اپنے کشمیری بھائیوں کے حق میں آواز بلند کی ہے۔ اے پی ایم ایل خواتین ونگ کی جنرل سیکریٹری ثروت زہرہ نے کہا کہ یہ بہترین اتفاق ہے کہ اس دفعہ کا یومِ دفاع محرم الحرام کے مقدس مہینہ میں آیا ھے جس میں واقعہِ کربلا رونما ہوا جو سیدنا حسین علیہ السلام کی عظیم قربانی سے جگمگا رہا ہے۔ امام حسین نے قربانی دے کر قیامت تک حق و باطل میں امتیاز کرنا سکھا دیا۔ 

عالمِ اسلام میں سید الشہداء  جنابِ امیر حمزہ اور سیدنا حسین کی شہادت نے اس درجہ کو مسلمان کے لئے اعزاز بنا دیا ہے۔ افواجِ پاکستان اسی جذبہ سے سرشار اپنے ملک کے لئے جان کی قربانی دینا عین سعادت سمجھتی ہیں۔ تقریب میں شامل خواتین نے اپنے شہداء کے ساتھ کشمیر میں شہید ہو رہے مسلمانوں کو بھی خراجِ عقیدت پیش کیا۔ تقریب کے شرکاء میں خواتین ونگ کی نائب صدر صائمہ سعید، نے چھ ستمبر کو اپنے کشمیری بھائیوں کے ساتھ یکجہتی کے ساتھ مربوط کرتے ہوئے کہا کہ پاکستانی عوام ان کے شانہ بشانہ انکی جدوجہد میں شامل ہیںبعد ازاں نجمی مسرت صاحبہ نے اپنی پرسوز آواز میں امام عالی مقام اور شہیدوں کو خراجِِ عقیدت پیش کیا۔ تقریب کے شرکاء میں رامیہ شیخ، سامیہ جمال، شاہین جمال، پروین زہرہ اور دیگر کے نام نمایاں تھے۔ تقریب کے اختتام پر پاکستان کی سلامتی اور کشمیر کے پر سکون حالات کے لئے خصوصی دعائیں کی اور شہداء کے لئے سورہ فاتحہ کا نذرانہ بھی پیش کیا گیا۔ 

مزید : عرب دنیا


loading...