کرپشن کیس،ملزم رضوان اشرف کے جسمانی ریمانڈ میں 7 روز توسیع

 کرپشن کیس،ملزم رضوان اشرف کے جسمانی ریمانڈ میں 7 روز توسیع

  

لاہور(نامہ نگار)احتساب عدالت کے جج اسد علی نے گجرات پولیس میں اربوں روپے کرپشن سکینڈل کیس میں ملوث سابق پولیس افسر رائے اعجاز کے شریک ملزم رضوان اشرف کے جسمانی ریمانڈ میں 7 روز کی توسیع کردی،عدالت نے کیس کی سماعت 15 ستمبر تک ملتوی کرتے ہوئے ملزمان کو آئندہ سماعت پر فرد جرم کی کارروائی کے لئے طلب کرلیاہے،عدالت نے سابق سی ٹی او لاہورو ایس ایس پی رائے اعجاز اور سابق ڈی پی او کامران ممتاز سمیت تمام ملزمان کو بھی آئندہ سماعت پر دوبارہ پیش ہونے کا حکم دیاہے،تمام ملزمان کو ریفرنس کی کاپیاں فراہم کی جاچکی ہیں،سابق سی ٹی او لاہور رائے اعجاز سمیت تمام ملزمان عدالت میں پیش نہ ہوئے،شریک ملزم اکاؤنٹنٹ رضوان اشرف کو 14 روزہ جسمانی ریمانڈ کے بعد عدالت میں پیش کیا گیا،گزشتہ روزنیب پراسیکیوٹر حارث قریشی عدالت میں پیش ہوئے،نیب کے پراسیکیوٹر کا موقف ہے کہ شریک ملزم رضوان نیب کی حراست میں ہے اس سے تفتیش جاری ہے، تفتیش مکمل ہوتے ہی ملزم کو شریک ملزمان کے ساتھ فرد جرم کے لئے پیش کیا جائے گا۔

، ملزم ایس پی محمد ریاض کی جانب سے دستخط کی تصدیق کے لئے درخواست دائر کی جاچکی ہے،سابق سی ٹی او لاہور رائے اعجاز، سابق ڈی پی او کامران ممتاز، سابق ایس پی محمد ریاض کی لاہور ہائیکورٹ سے ضمانت منظور کی جاچکی ہے،نیب کی جانب سے ملزمان متعلق ریفرنس دائر کیا جاچکا ہے،ملزمان پر پولیس ملازمین کی کروڑوں روپے کی وردیاں ہڑپ کرنے کا الزام ہے، ملزمان نے پولیس کی گاڑیوں کو ملنے والے ڈیزل میں بڑے پیمانے پر صوابدیدی فنڈز میں خوردبرد کی۔

مزید :

علاقائی -