15ستمبر سے شادی ہالز کھولنے،ماسک کی پابندی لازمی قرار دینے کی تجویز

      15ستمبر سے شادی ہالز کھولنے،ماسک کی پابندی لازمی قرار دینے کی تجویز

  

 لاہور(این این آئی)شادی ہالز میں تقریبات کے دوران ماسک پہننا لازم قرار دینے کا فیصلہ کرلیا گیا۔پنجاب حکومت کی جانب سے 15 ستمبر کے بعد شادی ہالز کھولنے کے فیصلے کے بعد ماسک کی پابندی کی مشکل صورتحال سامنے آ گئی ہے۔ ذرائع کے مطابق حکومت شادی ہالز ایس او پیز میں شرکاء کے لئے ماسک پہننے کی پابندی لازمی قرار دینے کا فیصلہ کر چکی ہے تاہم حکومت نے کسی بھی بدمزگی سے بچنے اور خواتین پر ماسک کی پابندی کو لازمی بنانے کیلئے شادی ہالز مالکان سے تجاویز مانگ لی ہیں جبکہ شادی ہالز مالکان نے مردوں پر تو ماسک کی پابندی کو یقینی بنانے کی یقین دہانی کرائی ہے لیکن خواتین پر پابندی کرانے کے حوالے سے معذوری ظاہر کی ہے۔ طے شدہ ایس او پیز کے تحت 200افراد کی گنجائش والے شادی ہالز میں صرف 100افراد کو بٹھایا جائے گا جبکہ کھانا فراہم کرنیوالا عملہ ماسک اور گلووز کا استعمال یقینی بنائیگا۔

شادی ہالز

مزید :

صفحہ اول -