برانڈ فاؤنڈیشن کی خدمات قابل ستائش، پذیرائی ضروری ہے: فروغ نسیم 

برانڈ فاؤنڈیشن کی خدمات قابل ستائش، پذیرائی ضروری ہے: فروغ نسیم 

  

  کراچی (اسٹاف رپورٹر)وفاقی وزیر قانون و انصاف بیرسٹرڈاکٹر فروغ نسیم نے کہا ہے کہ برانڈز کے فروغ کے لیے برانڈ فاؤنڈیشن کی خدمات قابل ستائش ہیں حکومتی اور نجی سطح پر ان کی بھر پور پذیرائی ہونی چاہئے۔پاکستان کی ترقی کراچی کی ترقی سے مشروط ہے۔ملکی میشت میں میمن برادری کے کردار کو نظر انداز نہیں کیا جا سکتا ہے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے برانڈ آف دی ایئر ایوارڈ کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ گذشتہ روزبرانڈ فاؤنڈیشن کے زیر اہتمام مو ون پک ہوٹل میں برانڈ آف دی ایئر ایوارڈ 2019کا انعقادکیا گیا جس میں 140نیشنل اورملٹی نیشنل ادروں کو برانڈ ایوارڈ اور7کو برانڈ آئیکون سے نوازا گیا۔اس موقع پرصدر کراچی چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹریزآغا شہاب احمد خان، صدر برانڈ فاؤنڈیشن اور سابق وفاقی سیکریٹری الیکشن کمیشن پاکستان کنور محمد دلشاد،چیف پیٹرن برانڈ فاؤنڈیشن اور چیئرمین ایچ ایم آر گروپ حاجی محمد رفیق پردیسی، پیٹرن برانڈ فاؤنڈیشن اور سی ای او اوساکا لائٹس شمیم احمد، سابق ایڈیشنل کلکٹر کسٹم ڈاکٹر شہاب امام، گروپ ڈائریکٹر برانڈ فاؤنڈیشن ایئر کموڈور (ر)انعام اللہ احسان ستارہ امتیاز (ملٹری) اور سی ای او برانڈ فاؤنڈیشن شیخ راشد عالم بھی موجود تھے۔ تقریب میں مختلف کمپنیوں کے سر براہان اور نمائندگان کی بڑی تعداد نے شرکت کی۔اس موقع پر ملک کی سرکردہ شخصیات اوربزنس کمیونٹی کی ممتاز شخصیات بھی موجود تھیں۔تمام ایوارڈ یافتگان کو ایوارڈ وفاقی وزیر قانون و انصاف بیرسٹر ڈاکٹر فروغ نسیم نے برانڈ آف دی ائیر کی ٹرافی اور صدر کراچی چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری آغا شہاب احمد خان نے اسناد دیں۔وفاقی وزیر قانون و انصاف بیرسٹر فروغ نسیم نے مزید کہا کہ ہمیں ففتھ جنریشن وار سے نمٹنا ہے تو برانڈ فاؤنڈیشن جیسے اداروں کو مضبوط کرنا ہو گا۔پاکستان کا دفاع مضبوط ہاتھوں میں ہے معیشت کو مضبوط کرنا ہے۔موجودہ حکومت اقتصادی ترقی کے حوالے سے ہر ممکن سہولت فراہم کر رہی ہے۔بزنس کمیونٹی کے تمام مسائل ترجیحی بنیادوں پر حل کیے جائیں گے۔انہوں نے کہا کہ بزنس کمیونٹی کے لیے میرے دروازے 24گھنٹے کھلے ہیں۔انہو ں نے کہا کہ ایک وقت تھا کہ پاکستان جرمنی کو قرض دیا کرتا تھا۔ امریکا اور یورپی ممالک سے نوجون تعلیم حاصل کرنے کے لیے کراچی یونیورسٹی ا?یا کرتے تھے۔بھٹو صاحب نے اپنے دور میں نیشنلائزیشن کرکے ہر چیز کو تباہ کردیا ہم آج بھی اس نیشنلائزیشن کے جھٹکے برداشت کررہے ہیں۔بیرسٹر ڈاکٹر فروغ نسیم نے کہا کہ معاشی استحکام کے لیے ضروری ہے کہ قوم میں برانڈ ایمپاورمنٹ کی اہمیت، افادیت اور ضرورت کے حوالے سے شعور اجاگر کیاجائے۔یومِ دفاع کے موقع پر برانڈ آف دی ایئر 2019کا انعقاد خوش آئند ہے۔انہوں نے تمام ایوارڈ یافتگان کو مبارکباد پیش کرتے ہوئے اس توقع کا اظہار کیا نجی شعبہ تحقیق کے شعبہ میں بھی سرمایا کاری کرے آج کا دور نالج اکنامی کا ہے جس کے لیے تحقیق اور ایجادات کی حوصلہ افزائی کیے بغیر کامیابی حاصل نہیں کی جا سکتی ہے۔قبل ازیں تقریب سے خطاب کرتے ہوئے چیف پیٹرن برانڈ فاؤنڈیشن اور چیئرمین ایچ ایم آر گروپ حاجی محمد رفیق پردیسی نے کہا کہ حکومت نے جس طرح تعمیراتی صنعت کے لیے پالیسی دی ہیں اس سے اس شعبہ میں بہت بہتری ا?نے کے امکانات پیدا ہوئے ہیں۔اسی طرح دیگر شعبوں کو بھی فوکس کرتے ہوئے پالیسیاں تیار کی جائیں اور ملکی سرمایہ کاروں کو بہتر مواقع فراہم کیے جائیں تو ملک میں معاشی انقلاب لایا جا سکتا ہے۔پاکستان میں معدنی وسائل بے شمار ہیں حکومت کو چاہئے کہ اس ضمن میں بھی واضح حکمت عملی ترتیب دیتے ہوئے معدنی وسائل کو نکالنے او ر انہیں ترقی دینے کے لیے ملکی سر مایہ کاروں کو راغب کیاجائے۔قبل ازیں صدر برانڈ فاؤنڈیشن اور سابق وفاقی سیکریٹری الیکشن کمیشن پاکستان کنور محمد دلشاد نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان کو معاشی استحکام کی جانب لے جانے کے لیے ہماری بزنس کمیونٹی کی کوششیں لائق تحسین ہیں۔

مزید :

صفحہ اول -