لاپتہ ساجد گوندل کے اہلخانہ کا وزیراعظم ہاؤس کے سامنے احتجاجی مظاہرہ 

لاپتہ ساجد گوندل کے اہلخانہ کا وزیراعظم ہاؤس کے سامنے احتجاجی مظاہرہ 

  

  اسلام آباد (آن لائن)ایس ای سی پی کے لاپتہ افسر ساجد گوندل کے اہل خانہ وزیر اعظم آفس کے باہر پہنچ گئے اور وزیر اعظم عمران خان آرمی چیف اور چیف جسٹس آف پاکستان سے ساجد گوندل کی بازیابی کیلئے اپنا کردار ادا کرنے کی اپیل کر دی۔تفصیلات کے مطابق منگل کے روز ایس ای سی پی کے لاپتہ افسر ساجد گوندل کے اہلخانہ اور دیگر شہری وزیر اعظم ہاؤس پہنچ گئے،مظاہرین میں خواتین اور بچوں نے کثیر تعداد میں شرکت کی،بچوں نے ساجد گوندل کی بازیابی کے پوسٹر اٹھا رکھے تھے اور نعرے بازی کررہے ہیں۔ساجد گوندل کی والدہ نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ میرا بیٹا مجھے سلامتی کے سا تھ واپس چاہیے،میرے بیٹے نے کوئی جرم نہیں کیا،ہمیں بتایا جائے کہ ہمارے بیٹے کا کیا قصور ہے؟وہ پاکستان کا شہری ہے،اغواء کے معاملے پر وزیر اعظم کا  فرض تھا وہ معلوم کرتے ان کا شہری کہاں گیا ہے،عمران کی ناک کے نیچے  سے میرے بیٹے کی اغواء کا تشویشناک معاملہ ہے،انہوں نے کہا کہ میں نے اس ملک کی 45 سال  خدمت کی ہے،میرا بیٹا کس حال میں ہوگا،یہ درد صرف ماؤں کو پتہ ہے،مجھے راتوں کو نیند نہیں آتی۔میری بیٹے سے بات کرائی جائے،انہوں نے کہا کہ میرے بیٹے کو اغواء ہوئے  ایک ہفتہ گزرنے کو ہے لیکن وزیراعظم  عمران خان نے اس کا نوٹس نہیں لیا،وزیر اعظم کو سوچنا چاہئے آپ کے بھی دوبیٹے ہیں۔ان بیٹوں کو مدنظر رکھیں اور نوٹس لیں میرے بیٹے کو براامد کرائیں،ہمیں بتایا جائے ہمارے ساتھ کیوں یہ سلوک کیا جارہا ہے،انہوں نے وزیر اعظم سے مطالبہ کیا کہ میرے بیٹے کو فوری طور بازیابی کے لئے احکامات جاری کرے۔بعدازاں لاپتہ افسر ساجد گوندل کی اہلیہ نے میڈیا سے گفگتو کرتے ہوئے کہا کہ وزیراعظم، آرمی چیف اور چیف جسٹس سے درخواست ہے بتایا جائے میرے خاوند کو کیوں اٹھایا گیااس کا کیا قصور ہے،اگر ان کیخلاف کوئی کیس ہے تو عدالت میں کیس چلایا جائے،وہ ایک پاکستانی شہری ہے،کسی ادارے نے اب تک ہم سے رابطہ نہیں کیا،انہوں نے کہا کہ میرے چھوٹے چھوٹے بچے ہیں اور روزانہ اپنے والد کا پوچھتے ہیں مجھے بتاتا جائے میں اپنے بچوں کو کیا جواب دوں۔بعدازاں ساجد گوندل کے اہلخانہ سے مذاکرات کیلئے اے سی سیکرٹریٹ اسد اللہ وزیراعظم آفس پہنچ گئے انہوں نے کہا کہ ساجد گوندل کی  بازیابی کیلئے ادارے کوشش کررہے ہیں،متعلقہ اداروں سے بھی رابطہ کیا جارہا ہے امید ہے جلد کو بازیاب کرالیا  جائے گا۔

ساجد گوندل

مزید :

صفحہ اول -