پا بہ دامن ہو رہا ہوں بسکہ میں صحرا نورد

پا بہ دامن ہو رہا ہوں بسکہ میں صحرا نورد
پا بہ دامن ہو رہا ہوں بسکہ میں صحرا نورد

  

پا بہ دامن ہو رہا ہوں بسکہ میں صحرا نورد

خارِ پا ہیں جوہرِ آئینۂ زانو مجھے

دیکھنا حالت مرے دل کی ہم آغوشی کے وقت 

ہے نگاہِ آشنا تیرا سرِ ہر مو مجھے

ہوں سراپا سازِ آہنگِ شکایت کچھ نہ پوچھ

ہے یہی بہتر کہ لوگوں میں نہ چھیڑے تو مجھے

شاعر: مرزا غالب

Paa Ba Daman Ho Raha Hun Bas Keh Main Sehra Naward

Khaar Paa Hen Johar Aaina e Zaano Mujhay

Dekhna Haalat Miray Dil Ki Ham Aghoshi K Waqt 

Hay Nigaaah e Aashna , Tera Sar e Har Moo Mujhay

Hun Saraapa Saaz e Aahang Shikaayat Kuch na Pooch

Hay Yahi Behtar Keh Logon Men Ni Cherray Tu Mujhay

Poet: Mirza Ghalib

مزید :

شاعری -رومانوی شاعری -سنجیدہ شاعری -