اسلام آبادہائیکورٹ ،وزارت خارجہ کے افسروں کی سفارتخانوں میں من پسند تعیناتیوں کیخلاف درخواست قابل سماعت ہونے پر فیصلہ محفوظ 

اسلام آبادہائیکورٹ ،وزارت خارجہ کے افسروں کی سفارتخانوں میں من پسند ...
اسلام آبادہائیکورٹ ،وزارت خارجہ کے افسروں کی سفارتخانوں میں من پسند تعیناتیوں کیخلاف درخواست قابل سماعت ہونے پر فیصلہ محفوظ 

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)اسلام آبادہائیکورٹ نے وزارت خارجہ کے افسروں کی سفارتخانوں میں من پسند تعیناتیوں کیخلاف درخواست قابل سماعت ہونے پر فیصلہ محفوظ کرلیا۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق اسلام آبادہائیکورٹ میں وزارت خارجہ کے افسران کی سفارت خانوں میں تعیناتی سے متعلق کیس کی سماعت ہوئی، درخواست گزار افسران کی جانب سے بیرسٹر ظفراللہ عدالت میں پیش ہوئے،وکیل بیرسٹر ظفر اللہ نے موقف اختیار کیاکہ رواں سال 9 رکنی کمیٹی کی پالیسی کی خلاف ورزی کی گئی،متعدد بار معاملے کو وزارت خارجہ کے سامنے اٹھایا مگر داد رسی نہیں ہوئی۔

 جسٹس میاں گل حسن اورنگزیب نے استفسارکیاکہ اس کمیٹی کے تحت کیا کرنا تھا؟،عدالت نے کہاکہ تعیناتی سے متعلق کسی زمانے میں پالیسی بنی تھی ،پالیسی تھی بیرون ملک پوسٹ کے بعددوسری پوسٹنگ کیلئے پاکستان میں پوسٹ رہنا تھا۔

بیرسٹر ظفراللہ نے کہا کہ جی یہی پالیسی ہے 2015 کی جس میں یہ تمام پوائنٹس موجود ہیں،جسٹس میاں گل حسن اورنگزیب نے کہاکہ کون کون سی پوسٹنگ میں قانون کی خلاف ورزی کی گئی؟ ،بیرسٹر ظفراللہ نے کہاکہ کئی دورانیے کی خلاف ورزی ہے کتنا پیریڈ کس آدمی نے کہاں رہنا ہے، عدالت نے دلائل کے بعد درخواست قابل سماعت ہونے پر فیصلہ محفوظ کر لیا۔

مزید :

قومی -علاقائی -اسلام آباد -