توشہ خانہ ریفرنس،آصف زرداری اوریوسف رضاگیلانی پر فردجرم عائد،نوازشریف اشتہاری قرار

توشہ خانہ ریفرنس،آصف زرداری اوریوسف رضاگیلانی پر فردجرم عائد،نوازشریف ...
توشہ خانہ ریفرنس،آصف زرداری اوریوسف رضاگیلانی پر فردجرم عائد،نوازشریف اشتہاری قرار

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)توشہ خانہ ریفرنس میں سابق صدر آصف زرداری اوریوسف رضاگیلانی پر فردجرم عائد کردی گئی جبکہ سابق وزیراعظم نوازشریف کو اشتہاری قراردیدیا گیا۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق احتساب عدالت اسلام آباد میں توشہ خانہ ریفرنس پر ہوئی ،سابق صدر آصف زرداری ، یوسف رضاگیلانی عدالت میں پیش ہوئے ،اس موقع پر سکیورٹی کے سخت انتظامات کئے گئے تھے،عدالت نے آصف زرداری اور یوسف رضا گیلانی پرفردجرم عائد کردی جبکہ سابق وزیراعظم نوازشریف کو اشتہاری قراردیدیا،احتساب عدالت کے جج اصغرعلی نے فرد جرم عائد کی،جج اصغر علی نے کہا کہ پہلے نواز شریف کا کیس الگ کریں گے پھر دیگرپر فرد جرم عائد کریں گے 

جج احتساب عدالت نے فاروق ایچ نائیک سے مکالمہ کرتے ہوئے کہاکہ آپ نے چارج شیٹ پڑھنی ہے توپڑھ لیں ،سابق صدر آصف زرداری اور یوسف رضا گیلانی نے صحت جرم سے انکار کردیا،جج احتساب عدالت نے کہاکہ کیا ملزمان صحت جرم سے انکار کررہے ہیں؟، وکیل صفائی نے کہاکہ وزیراعظم کے پاس اختیار ہوتا ہے کہ سمری کی منظوری دے،عدالت نے کہاکہ ہم ابھی کیس کے میرٹس پر بات نہیں کررہے کہ سمری کیسے آئی اور منظور ہوئی ۔جج نے یوسف رضا گیلانی کو ہدایت کرتے ہوئے کہاکہ یہ بات آپ ٹرائل کے دوران عدالت کو بتانا،یوسف رضاگیلانی نے کہاکہ نیب نے رولز آف بزنس کو دیکھے بغیر ریفرنس بنایا۔

عدالت نے سابق وزیراعظم نوازشریف کی منقولہ اورغیر منقولہ جائیداد کی تفصیلات طلب کرتے ہوئے کہاکہ نوازشریف کی عدم پیشی پر جائیداد منجمد کرلی جائے گی ،عدالت نے ایک ہفتے میں نوازشریف کی جائیدادکی تفصیلات پیش کرنے کی ہدایت کردی،سابق صدر آصف زرداری نے شورٹی بانڈ پر دستخط کردیئے ،عدالت نے آئندہ سماعت پر 3 گواہوں کو طلب کرلیا،نیب کے گواہوں میں وقارالحسن شاہ، زبیر صدیقی اور عمران ظفر شاہ شامل ہیں ،عدالت نے توشہ خانہ ریفرنس کی سماعت 24 ستمبر تک ملتوی کردی ۔

مزید :

اہم خبریں -قومی -علاقائی -اسلام آباد -