دنیا میں سب سے چھوٹی کمر حاصل کرنے کی خواہشمند ماڈل لڑکی نے اس خواہش کی تکمیل میں دو کروڑ روپے خرچ کردئیے

دنیا میں سب سے چھوٹی کمر حاصل کرنے کی خواہشمند ماڈل لڑکی نے اس خواہش کی تکمیل ...
دنیا میں سب سے چھوٹی کمر حاصل کرنے کی خواہشمند ماڈل لڑکی نے اس خواہش کی تکمیل میں دو کروڑ روپے خرچ کردئیے

  

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) مقابلہ حسن ’مس یونیورس‘ میں حصہ لینے والی ایک ماڈل نے اپنی کمر پتلی کروانے کے لیے اتنی رقم خرچ کر ڈالی ہے کہ سن کر آپ کی حیرت کی انتہاءنہ رہے گی۔ ڈیلی سٹار کے مطابق اس ماڈل کا نام ڈورا روڈریگوئز ہے جو مس یونیورس مقابلے میں تو نہ جیت سکی لیکن اس کی خواہش تھی کہ اس کی کمر دنیا میں سب سے پتلی ہو چنانچہ اس نے اس مقصد کے لیے پلاسٹک سرجری اور دیگر پروسیجرز کروانے شروع کر دیئے اور اب تک ان پر 1لاکھ پاﺅنڈ (تقریباً 2کروڑ 15لاکھ روپے)خرچ کر چکی ہے۔

رپورٹ کے مطابق ڈورا نے گزشتہ دنوں اپنی نئی تصویر اپنے سوشل میڈیا اکاﺅنٹ پر پوسٹ کی جس میں اس کی انتہائی دبلی کمر دیکھ کر اس کے مداح دنگ رہ گئے۔ ماڈل نے اس تصویر کے ساتھ اپنی پوسٹ میں لکھا کہ ”میں حالیہ چند مہینوں میں اپنی کمر پتلی کروانے پر 1لاکھ پاﺅنڈ خرچ کر چکی ہوں مگر تاحال میری کمر اتنی پتلی نہیں ہوئی جتنی میں چاہتی ہوں۔ ہو سکتا ہے اپنی خواہش کے مطابق اپنی کمر کو پتلا کرنے کے لیے مجھے کچھ پسلیاں نکلوانی پڑیں۔ اگر اس کی ضرورت پیش آئی تو میں اپنی پسلیاں بھی نکلوا دوں گی تاکہ دنیا میں سب سے زیادہ پتلی کمر کا خواب پورا کر سکوں۔“

مزید :

ڈیلی بائیٹس -