شہید قوال امجد صابری کے اہل خانہ نے پاکستان چھوڑ کر لندن جانے کا فیصلہ کر لیا

شہید قوال امجد صابری کے اہل خانہ نے پاکستان چھوڑ کر لندن جانے کا فیصلہ کر لیا
شہید قوال امجد صابری کے اہل خانہ نے پاکستان چھوڑ کر لندن جانے کا فیصلہ کر لیا

  

نئی دہلی (ڈیلی پاکستان آن لائن ) شہید قوال امجد صابری کے اہل خانہ نے پاکستان چھوڑنے کا فیصلہ کر لیا ۔

”دی ٹائمز آف انڈیا “ کے مطابق شہید امجد صابری کے اہل خانہ نے سیکیورٹی خدشات کے باعث پاکستان چھوڑ کر لندن جانے کا فیصلہ کر لیا ہے ۔امجد صابری کے بھائی عظمت صابری نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ ”اگرچہ ہم نے اپنی زندگیاں کراچی میں گزار دیں مگر اب ہم خوف زدہ ہیں ،امجد صابری کی شہادت کے بعد ہماری زندگیوں کو بھی لیاقت آباد میں خطرات لاحق ہیں جس کے باعث ہم نے لندن جانے کا فیصلہ کیا ہے “۔

انتہا پسندانہ نظریات کے الزام پر فرانس نے سوئٹزر لینڈ کے معلم کو ملک بدر کر دیا

عظمت صابری کا کہنا تھا کہ ہمارا خیال ہے حکومت ہمارے سفری اخراجات برداشت کرے ۔ انہوں نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ انکے بھائی کے قاتلوں کو قانون کے کٹھرے میں لایا جائے ۔

شہید امجد صابری کی والدہ نے کہا کہ میں مزید بچوں کو نہیں کھونا چاہتی۔ بہت سوچنے کے بعد ملک چھوڑنے کا فیصلہ کیا ہے۔ پہلے بھی لوگ ڈیفنس شفٹ ہونے کا مشورہ دیتے تھے لیاقت آباد سے محبت کی وجہ سے ڈیفنس شفٹ نہیں ہوئے تھے۔ ” ہمیں باہر جانے کیلئے پاکستانی حکومت کی مدد کی ضرورت ہے“۔

امجد صابر ی کے بھائی طلحہ صابری نے کہا کہ مشکوک لوگ محلے میں میرے متعلق معلومات لے رہے ہیں اس سے پہلے کہ کچھ غلط ہو ملک سے باہر جانا چاہتے ہیں۔ حکومت باہر جانے میں ہماری مدد کرے۔

مزید :

کراچی -