بیلٹ اینڈ روڈ اقدام ترقی اور امن کا مثبت پیغام ہے : وزیر اعظم

بیلٹ اینڈ روڈ اقدام ترقی اور امن کا مثبت پیغام ہے : وزیر اعظم

بیجنگ،سان یا،خائنان (آئی این پی )وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ چین کا وژن صرف اس خطے کیلئے نہیں بلکہ ساری دنیا کیلئے فائدہ مند ثابت ہو گا، چین دنیا میں اقتصادی آزادی کا چمپئن ہے، اپنے لئے راستے کھولنا اور آزادی دینا ہی واحد راستہ ہے جس کے ذریعے آگے بڑھا جا سکتا ہے، پاکستان نے اپنے شعبہ مالیات میں انتظامی حکمت عملی کے تحت چینی کرنسی یوآن کو ریزرو کرنسی کے طور پر اپنایا ہے، شنگھائی تعاون تنظیم میں پاکستان کی شمولیت دیگر ممالک کو بھی فائدہ پہنچائے گی، مثبت سمت میں اٹھائے گئے اقدامات پاکستان اور بھارت کے مابین تعلقات کو بہتر بنانے میں مددگار ثابت ہو ں گے، سی پیک نے پاکستان کو ترقی کرنے اور معاشی قرضے اتارنے میں مدد کی ہے۔ وزیراعظم کا کہنا ہے کہ سی پیک منصوبہ پاکستان کی ترقی کا باعث بنے گا اور دنیا تسلیم کررہی ہے کہ بیلٹ اینڈ روڈ اقدام نسلوں کی ترقی کا اقدام ہے۔چائنا گلوبل ٹیلیوژن نیٹ ورک کو انٹرویو دیتے ہوئے وزیراعظم نے کہا کہ سی پیک منصوبہ پاکستان کی ترقی کا باعث بنے گا جب کہ بیلٹ اینڈ روڈ اقدام دنیا کے لیے ترقی کا پیغام ہے، دنیا تسلیم کررہی ہے بیلٹ اینڈ روڈ اقدام نسلوں کی ترقی کا اقدام ہے، اس اقدام سے پاکستان اور چین کو فائدہ ہوگا۔اس سے قبل چینی ذرائع ابلاغ سے گفتگو میں وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کا کہنا تھا کہ گوادر بندرگاہ، ایئرپورٹ اور ہائی ویز کا جال چین کے مغربی حصے اور وسط ایشیاء کو گرم پانی تک لانے کے بہترین ذرائع ثابت ہوں گے اور ’’ایک خطہ ، ایک سڑک‘‘ منصوبے کا یہ نمایاں پہلو ہے۔وزیراعظم نے کہا کہ چینی صدر شی چن پنگ کا یہ اقدام اس خطے اور مغرب کے درمیان تجارت اور لوگوں کے درمیان رابطے کے نئے مواقع پیدا کرے گا، اس منصوبے کا مضبوط پہلو رابطے قائم کرکے لوگوں کو جوڑنا ہے اور اس طرح نوع انسانی کو مشترکہ مستقبل ملتا ہے۔ وزیراعظم کا مزید کہنا تھا کہ اْن کی حکومت پاک چین اقتصادی راہداری منصوبے کے ذریعے پاکستان کو بیلٹ اینڈ روڈ منصوبے کا اہم شراکت دار بنانا چاہتی ہے۔ دوسری جانب پاکستان اور چین کے درمیان تیل و گیس کے شعبے میں تعاون کی دو مفاہمتی یاداشتوں پر دستخط کردیئے گئے۔ دستخط چین کے صوبہ ہینان کے شہر سان یا میں ایک سادہ تقریب میں کئے گئے جس میں وزیراعظم شاہد خاقان عباسی‘ پاور چائنا کمپنی کے نائب صدر لی یانمنگ‘ وزیر خارجہ خواجہ محمد آصف‘ چین میں پاکستان کے سفیر مسعود خالد‘ چین کے سفیر یاؤ جنگ اور سینئر حکام نے بھی شرکت کی۔ سمجھوتہ انٹرسٹیٹ گیس سسٹم پاکستان اور پاور چائنہ کے درمیان طے پایا۔ سمجھوتے کے تحت شمال سے جنوب گیس پائپ لائن بچھائی جائے گی۔ گیس پائپ لائن بڑھتی ضرورت والے علاقوں میں سپلائی یقینی بنائے گی پاکستان سٹیٹ آئل اور پاور چائنہ کے درمیان مفاہمت کی یاداشت پر بھی دستخط کئے گئے۔ سمجھوتہ کے تحت آئل ریفائنری کا قیام عمل میں لایاجائے گا اور خام تیل کی پائپ لائن بھی بچھائی جائے گی۔ منصوبہ پٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں کم کرنے کا باعث بنے گا۔ وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے اس موقع پر کہا کہ پاکستان چین کی قیادت کے مثبت وژن سے متفق ہے منصوبے کے تحت شمال سے جنوب گیس پائپ لائن بچھائی جائے گی۔

وزیراعظم شاہد خاقان

مزید : صفحہ اول