وزیراعلیٰ بلوچستان  نے ملازمین کے احتجاج کے طریقہ کار اور پلیٹ فارم کو نامناسب قرار دے دیا 

وزیراعلیٰ بلوچستان  نے ملازمین کے احتجاج کے طریقہ کار اور پلیٹ فارم کو ...
وزیراعلیٰ بلوچستان  نے ملازمین کے احتجاج کے طریقہ کار اور پلیٹ فارم کو نامناسب قرار دے دیا 

  

کوئٹہ(ڈیلی پاکستان آن لائن) وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان نے کہا کہ ملازمین کی جانب سے احتجاج کا طریقہ کار اور پلیٹ فارم مناسب نہیں تھا کسی بھی احتجاج یا معاملے کو تعداد نہیں بلکہ حقائق دیکھ کر فیصلہ کرتا ہوں، میں حقیقی اور ضروری مسائل کو ہمیشہ دل سے حل کرنے کی پوری کوشش کرونگا، مشترکہ مفادات کونسل کے آئندہ اجلاس سے قبل مردم شماری کے نتائج جاری کرنے کے ایجنڈے پر اتحادیوں کو اعتماد میں لیا ہے

مائیکرو بلاگنگ ویب سائٹ پر  ٹویٹ کرتے ہوئے وزیراعلیٰ جام کمال خا نے کہا کہ 12دن احتجاج میں گزارنے کے

 بعد حتمی طور پر مشاورت اور بیٹھ کر بات چیت ہورہی ہے، ملازمین کی جانب سے جس پلیٹ فارم اور طریقے کا چناﺅ کیا گیا وہ مناسب نہیں تھا ۔انہوں نے کہا کہ میں کسی بھی فیصلے کو احتجاج یا مظاہرین کی تعداد دیکھ کر نہیں کرتا اگر کوئی ایک شخص یا 100 افراد ہوں معاملہ اگر حقیقی ہے اور وقت کی ضرورت ہے میں اسے ہمیشہ پوری کوشش کے ساتھ دل سے حل کروں گالیکن یہ دیکھ کر افسوس ہوتا ہے کہ اپوزیشن کس طرح کسی بھی موقع کو ہائی جیک کرنا چاہتی ہے اور بولنے کے لئے مائیک پکڑنا چاہتی ہے ۔

انہوں نے کہا کہ سی سی آئی کے آئندہ اجلاس میں مردم شماری کے ایجنڈے پر تمام اتحادی جماعتوں کے ساتھ مشاورتی اجلاس کیا گیا جس میں مردم شماری کے نتائج کے حوالے سے ایجنڈے پرانہیں اعتماد میں لیا گیا ۔

مزید :

علاقائی -بلوچستان -کوئٹہ -