وہ وقت جب محمد رضوان کو تھپڑ مار کر گراؤنڈ سے باہر نکال دیا گیا تھا

وہ وقت جب محمد رضوان کو تھپڑ مار کر گراؤنڈ سے باہر نکال دیا گیا تھا
وہ وقت جب محمد رضوان کو تھپڑ مار کر گراؤنڈ سے باہر نکال دیا گیا تھا
سورس: Instagram/mrizwanpak

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

لاہور (ویب ڈیسک) ٹی ٹوئنٹی ورلڈکپ میں شاندار کارکردگی دکھانے والے وکٹ کیپر بیٹسمین محمد رضوان نے کہا کہ جب میں کرکٹ گراؤنڈ دیکھنے کی خواہش میں گراؤنڈ چلاگیا تو مجھ سے گراؤنڈ مین نے پوچھا یہاں کیا کررہے ہو ؟ اس پر میں نے فوراً جواب دیا گراؤنڈ دیکھنے آیا ہوں تو اس نے  پیچھے سے تھپڑ مار کر باہر نکلنے کا کہا۔

سوشل میڈیا پر وائرل ایک کلپ  میں رضوان کا کہنا تھا کہ یہ بات سب کو پتا ہے کہ ان کا تعلق کسی بڑے گھرانے سے نہیں اور  نہ ہی وہ کسی بہت غریب فیملی سے تعلق رکھتے ہیں اس کے برعکس ان کا تعلق ایک متوسط طبقے سے ہے، یہی وجہ تھی کہ ان کے پاس کرکٹ کھیلنے کے لیے سامان بھی نہیں ہوتا تھا ۔

سوشل میڈیا اکاؤنٹس کے حوالے سے رضوان نے بتایا کہ ان کے پاس فیس بک اکاؤنٹ نہیں ہے، سوائے ٹوئٹر اور انسٹاگرام کے تصدیق شدہ اکاؤنٹس کے ان کا کوئی اکاؤنٹ نہیں، ایک واٹس ایپ اکاؤنٹ ہے جو کہ صرف فیملی کے لیے رکھا ہوا ہے اس کے علاوہ انہیں سوشل میڈیا کے حوالے سے  کچھ نہیں پتا  اور یہی وجہ تھی کہ وزڈن کرکٹر کا ایوارڈ جب دیا گیا تو انہیں کسی اور کھلاڑی نے اس حوالے سے آگاہ کیا۔

رضوان نے مزید بتایا کہ کرکٹ ٹیم کے حوالےسے کوئی بات ہو تو ہمارے میڈیا مینیجر ابراہیم مجھ تک پہنچاتے ہیں ۔

مزید :

کھیل -