موت کے ساتھ ہی انسانی جسم میں کیا تبدیلی آتی ہے؟ ایسی معلومات جو کسی کو بھی سوچنے پر مجبور کردیں

موت کے ساتھ ہی انسانی جسم میں کیا تبدیلی آتی ہے؟ ایسی معلومات جو کسی کو بھی ...
موت کے ساتھ ہی انسانی جسم میں کیا تبدیلی آتی ہے؟ ایسی معلومات جو کسی کو بھی سوچنے پر مجبور کردیں

  



نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) موت ایک اٹل حقیقت ہے، ہر ذی روح کو ایک دن موت کا ذائقہ چکھنا ہے۔ انسان نے خلاء کی وسعتوں اور سمندروں کی پنہائیوں کو تو مسخر کر لیا لیکن آج تک موت کی حقیقت کو نہیں پا سکے۔ ایک سوال ہمارے ذہنوں میں اکثر اٹھتا ہے وہ یہ ہے کہ مرنے کے بعد ہمارے جسم میں کیا کیا تبدیلیاں رونما ہوتی ہیں۔ ڈاکٹر جوڈی میلینیک سان فرانسسکو کے ایک ہسپتال میں چیف ایگزیکٹو آفیسر کے عہدے پر فائز ہیں اور ماہر فرانزک پتھالوجسٹ ہیں۔ انہوں نے اب تک 2500لاشوں کے پوسٹ مارٹم کیے ہیں۔

ڈاکٹر جوڈی بتاتے ہیں کہ جب انسان مرتا ہے تو اس کے جسم میں جو تبدیلیاں ہوتی ہیں ان میں سب سے پہلے اس کا دل دھڑکنا بند کر دیتا ہے اور خون کا بہاؤ رک جاتا ہے۔ سارا خون جسم کے نچلے حصے(لیٹے ہوئے جو حصہ زمین کی طرف ہو) میں جمع ہو جاتا ہے، یہی وجہ ہے کہ مرنے والے شخص کا چہرہ اور اوپر کا حصہ زردی مائل ہو جاتا ہے، کیونکہ جسم کے اوپری حصے میں خون باقی نہیں رہتا۔ آکسیجن کے باعث جسم کے اندر روپذیر ہونے والے تمام کیمیائی عمل رک جاتے ہیں۔ آنکھیں دھندلا جاتی ہیں اور مسلز سخت ہو جاتے ہیں۔ جسم کا درجہ حرارت کم ہو کر ماحول کے درجہ حرارت کی سطح پر آ جاتا ہے۔ بالآخر مقعد ، ناک ، منہ اور دیگر سوراخوں سے بیکٹیریا خون کی نالیوں میں داخل ہو جاتے ہیں اور جسم کے گلنے سڑنے کا عمل شروع ہو جاتا ہے ۔

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کیلئے کلک کریں

آئی فون ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کیلئے کلک کریں

مزید : ڈیلی بائیٹس


loading...