نئے سرچارج سے بجلی کے فی یونٹ قیمت میں 3روپے تک اضافہ ہوجائے گا،ظہیر بھٹہ

نئے سرچارج سے بجلی کے فی یونٹ قیمت میں 3روپے تک اضافہ ہوجائے گا،ظہیر بھٹہ

  



لاہور ( کامر س رپورٹر)چیئرمین لاہور ٹاؤن شپ انڈسٹریز ایسوسی ایشن ظہیر بھٹہ نے حکومت کی طرف سے بجلی کے بلوں میں 2نئے سرچارج فنانشل کاسٹ سرچارج اور ٹیرف ریشنلائزیشن سرچارج عائد کرنے پر سخت تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ ان دو نئے سرچارج کے باعث بجلی کے فی یونٹ قیمت میں 3روپے تک اضافہ ہوجائے گا انہوں نے کہا کہ بجلی کی قیمتوں میں اضافہ صنعتی ترقی کی راہ میں رکاوٹ ہے مہنگی بجلی اور بدترین لوڈ شیڈنگ نے صنعتوں کو بحران میں مبتلا کردیا ہے انہوں نے کہا کہ جب بھی بجلی مہنگی کی گئی تو صنعتی مقاصد کیلئے بجلی کی قیمتوں میں بھی ہوشربا اضافہ ہوتا رہا ہے حکومت کی طرف سے فیول ایڈجسٹمنٹ کی مد میں بجلی کی قیمتوں میں کمی کا صنعتکاروں کو کوئی فائدہ نہیں کیونکہ یہ صرف300یونٹ تک عام گھریلوعوام تک ہی محدو د ہے انہوں نے کہا کہ فیول ایڈجسٹمنٹ کا ڈرامہ بند کیا جائے اور بجلی کی قیمتوں میں اضافہ کی بجائے صنعتی مقاصد کیلئے بجلی کی قیمتوں میں کمی کی جائے ۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے خالد افضل شیخ سینئر وائس چیئرمین ،نعمان حسین وائس چیئرمین کے ساتھ ٹاؤن شپ انڈسٹریز کے صنعتکاروں کے مختلف وفود سے گفتگو کرتے ہوئے کیا ۔ظہیر بھٹہ نے کہا کہ واپڈا ذرائع کے مطابق جولائی میں پن بجلی کی ریکارڈ4ارب 43کروڑ40لاکھ یونٹ پیدا وار ہوئی ۔پن بجلی سے پیدا ہونی والی بجلی کی لاگت 2 روپے فی یونٹ تک ہے اس لیے اس سستی بجلی کا فائدہ بھی عوام اور صنعتکاروں کو دیا جائے اور بجلی کی قیمتوں میں سرچارج کی مد میں3روپے اضافہ کی بجائے 6سے8روپے فی یونٹ کمی کی جائے ۔انہوں نے کہا کہ انڈسٹریز کیلئے بجلی ٹیرف میں کمی سے ہی صنعتی ترقی کا خواب پورا ہوگا۔

مزید : میٹروپولیٹن 1


loading...