72ہزار پرائیویٹ عازمین حاجی کیمپوں سے ٹیکے لگوائیں گے، نوٹیفکیشن جاری

 72ہزار پرائیویٹ عازمین حاجی کیمپوں سے ٹیکے لگوائیں گے، نوٹیفکیشن جاری

  



لاہور(ڈویلپمنٹ سیل)وفاقی سیکرٹری مذہبی امور کی پرائیویٹ حج سکیم کو نظر انداز کرنے کی پالیسی یا ضد، (subsitute)پر بھی پابندی لگا دی حج آرگنائزر کو لاکھوں کا نقصان،سینکڑوں حج فارم خالی رہنے کا امکان،72ہزار پرائیویٹ عازمین حج حاجی کیمپوں سے ٹیکے لگوائیں گے نوٹیفکشن جاری کر دیا عازمین حج سمیت حج آرگنائزر اضطراب کا شکار ،اس سے پہلے پرائیویٹ سکیم کے حج آرگنائزر کو حج ٹریننگ کے پروگرام کے موقع پر انجکشن لگوانے کی سہولت فراہم کی جاتی ہے اور سرکاری عازمین حاجی کیمپوں سے لگواتے ہیں اس باروزارت مذہبی امور نے عجیب منطق پیش کی ہے حج آرگنائزر حاجیوں کو حج فارم کی کاپی دیں گے وہ دکھا کر حاجی کیمپوں سے حاجی ٹیکے لگوا سکیں گے اور موقع پر سٹفکیٹ بھی ملے گا حج آرگنائزر نے وزارت مذہبی امور کی پالیسی کو پرائیویٹ حج سکیم سے دشمنی قرار دیتے ہوئے کہا ہے پرائیویٹ عازمین کو خوار کرنے اور پرائیویٹ حج سکیم کو بدنام کرنے کی کوشش کی جا رہی ہے گورنمنٹ انجکشن کی رقم ایڈوانس لیتی ہے اور ہمیشہ حج تربیتی پروگراموں میں ٹیکے فراہم کیے جاتے ہیں اس سال بھی گزشتہ روایت برقرار رکھی جائے اور ٹیکے تربیتی پروگراموں میں فراہم کیے جائیں ،حج آرگنائزر نے کہا ہے وفاقی سیکرٹری پرائیویٹ سکیم کے حاجیوں کو ذلیل کرنے کے لیے مختلف ہتھکنڈے استعمال کر رہے ہیں حالانکہ سرکاری اور پرائیویٹ سکیم کے عازمین برابر ہیں سب اللہ کے مہمان ہیں سب کی ذمہ داری وزارت مذہبی امور کی ہے کہ حج کوٹہ کے مطابق 5فیصد حج فارم تبدیل کرنے جو کسی مجبوری یا اموات کی جگہ ہوتے ہیں اور یہ قانونی حق بھی ہے اس کو بھی تسلیم نہیں کیا جا رہا ،اگر کوئی حاجی بیمار ہو جاتا ہے یا فوت ہو جاتا ہے یا کوئی اور ایمرجنسی پڑ جاتی ہے تو حج فارم متبادل حاجی کا پُر کیا جاتا ہے وفاقی سیکرٹری اس کی بھی اجازت نہیں دے رہے یہ سرا سر زیادتی ہے ۔

مزید : صفحہ آخر


loading...