ود ہولڈنگ ٹیکس کے خلاف تاجروں نے احتجاج کی حکمت عملی کا اعلان کر دیا

ود ہولڈنگ ٹیکس کے خلاف تاجروں نے احتجاج کی حکمت عملی کا اعلان کر دیا
ود ہولڈنگ ٹیکس کے خلاف تاجروں نے احتجاج کی حکمت عملی کا اعلان کر دیا

  



لاہور ( مانیٹرنگ ڈیسک ) حکومت کی جانب سے نافذ کیے گئے ود ہولڈنگ ٹیکس کے خلاف تاجروں نے حکمت عملی کا اعلان کر دیا ہے ۔

تاجروں کی جانب سے اعلان کیا گیا ہے کہ حکومت کے خلاف مرحلہ وار احتجاج کیا جائے گا ۔ پہلے مرحلے میں ہر شہر کے تاجر 18 اگست کو پورے ملک میں ایف بی آر کے دفاتر کا گھیراﺅ کریں گے جبکہ دوسرے مرحلے میں 21 اگست کو ایف بی آر کے مرکزی دفتر اسلام آباد کا گھیراﺅ کیا جائے گا ۔ تاجروں کی جانب سے بتایا گیا ہے کہ اس صورتحال کے بعد بھی اگر حکومت نے ود ہولڈنگ ٹیکس کا نفاذ واپس نہ لیا تو 25 اگست سے کسی بینک کے ذریعے کوئی لین دین نہیں کیا جائے گا ۔ تاجر برادری کا کہنا تھا کہ 25 اگست کے بعد تمام لین دین کیش کی صورت میں کیا جائے گا اور اس اقدام سے بینک کو بڑا جھٹکا دیا جائے گا ۔

مزید : بزنس


loading...