عدالتی فیصلہ قبول نہ کرنے والے نواز شریف نے یوسف رضا گیلانی کی نا اہلی پر کیا کہا تھا؟ نجی ٹی وی ایسی ویڈیو منظر عام پر لے آیا کہ نواز شریف کی پریشانی اور عمران خان کی خوشی کی انتہا نہ رہے گی

عدالتی فیصلہ قبول نہ کرنے والے نواز شریف نے یوسف رضا گیلانی کی نا اہلی پر کیا ...
عدالتی فیصلہ قبول نہ کرنے والے نواز شریف نے یوسف رضا گیلانی کی نا اہلی پر کیا کہا تھا؟ نجی ٹی وی ایسی ویڈیو منظر عام پر لے آیا کہ نواز شریف کی پریشانی اور عمران خان کی خوشی کی انتہا نہ رہے گی

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) سابق وزیر اعظم نواز شریف نے اپنی نا اہلی کے فیصلے پر عملدرآمد تو کرلیا ہے مگر اسے  تسلیم نہیں کیا لیکن ایک وقت ایسا بھی تھا جب یوسف رضا گیلانی کو نا اہل قرار دیا گیا تو نواز شریف انہیں ڈنکے کی چوٹ پر گھر جانے کا کہتے اور سپریم کورٹ کا فیصلہ تسلیم نہ کرنے کی صورت میں حالات خراب ہونے کا عندیہ دیتے رہے تھے۔

جی ٹی روڈ سے خود کو بحال کرانے نہیں، گھر جا رہا ہوں،نااہلی کا فیصلہ ہو چکا تھا صرف جواز ڈھونڈا گیا ،نواز شریف

مسلم لیگ ن کی جانب سے نواز شریف کی نا اہلی کے فیصلے کو قبول نہیں کیا جا رہا جبکہ نواز شریف بھی گزشتہ تین چار روز سے مسلسل سینئر صحافیوں سے ملاقاتوں میں اس بات کا بار بار تذکرہ کر چکے ہیں۔ نواز شریف کی جانب سے عدالتی فیصلے کو قبول نہ کیے جانے پر نجی ٹی وی سماءنے 12 مئی 2012 کے ایک جلسے کی ویڈیو شیئر کی ہے جس میں نواز شریف سابق وزیر اعظم یوسف رضا گیلانی کی نا اہلی کے بارے میں گفتگو کر رہے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں :ایک جج نے کہا وزیراعظم کو پتہ ہونا چاہیے اڈیالہ جیل میں کافی جگہ ہے، ریمارکس پر افسوس ہوا: نواز شریف

ویڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ اس وقت نواز شریف نے کہا تھا کہ ”سپریم کورٹ نے یوسف رضا گیلانی کو سزا دی ہے لیکن وہ سزا کو تسلیم نہیں کر رہے اور کہتے ہیں کہ اپیل کریں گے، میں کہتا ہوں اپیل سے پہلے نیچے اترو اور گھر جاﺅ، جب گھر جاﺅ گے اپیل کرو، اگر اپیل میں تمہارے خلاف فیصلہ ہوتا ہے تو پھر بالکل گھر جاﺅ گے اور اگرحق میں فیصلہ آتا ہے تو واپس وزارت عظمیٰ کے منصب پر آجاﺅ گے، سپریم کورٹ فیصلہ دے اور آپ اسے ماننے سے انکار کردیں، ایسا ہونے نہیں دیا جائے گا، یہ انسانوں کی بستی ہے ہم اسے حیوانوں کی بستی نہیں بننے دیں گے“۔

یہ بھی پڑھیں: ن لیگ نے عدالت کے فیصلہ پرعملدرآمد کیا،تسلیم نہیں،نواز شریف دوبارہ وزیراعظم بنیں گے :سائرہ افضل تارڑ

واضح رہے کہ سابق وزیر اعظم یوسف رضا گیلانی کو اپریل 2012 میں سپریم کورٹ آف پاکستان نے توہین عدالت کیس میں پانچ سال کیلئے نا اہل قرار دیا تھا جبکہ سابق وزیر اعظم نواز شریف کو پاناما کیس میں 28 جولائی 2017 کو نا اہل قرار دیا گیا۔

ویڈیو دیکھیں

مزید : اسلام آباد