سپرے کے جدید طریقوں سے ہی کرم کش ادویات موثر ثابت ہو سکتی ہیں، ترجمان محکمہ زراعت

سپرے کے جدید طریقوں سے ہی کرم کش ادویات موثر ثابت ہو سکتی ہیں، ترجمان محکمہ ...

لاہور(کامرس رپورٹر )ترجمان محکمہ زراعت پنجاب نے کہا ہے کہ جدید تقاضوں کے مطابق سپرے سے ہی کرم کش ادویات موثر ثابت ہو سکتی ہیں، ماہرین کی رائے کو مدنظر رکھے بغیر سپرے کرنے سے کرم کش ادویات کا 50فیصد حصہ ضائع ہو جاتا ہے۔ زہر پاشی صحیح آلات اور صحیح طریقوں سے نہ کرنے سے کسان کو بھاری نقصان پہنچ سکتا ہے۔ ہاتھ یا انجن کی طاقت سے چلنے والے نیپ سیک سپرئیر کو اس طرح استعمال کریں کہ فصل کے اوپر اور اطراف سے دوائی موثر طریقہ سے پتوں تک پہنچ سکے۔ خیال رہے کہ ڈنڈی یعنی لانس پر نوزل تقریباً 45 درجہ کے زاویہ پر لگی ہوئی ہو اور ایک وقت میں صرف ایک قطار پر سپرے کریں۔

کرم کش ادویات کے سپرے کیلئے ہالوکون نوزل اور جڑی بوٹی کے اگاؤ سے پہلے ختم کرنے کیلئے فلڈ جیٹ اور جڑی بوٹیوں کو اگاؤ کے بعد ختم کرنے کیلئے فلیٹ فین نوزل استعمال کریں۔ زہرپاشی سے پہلے پمپ کو چلا کر مطلوبہ پریشر (3 بار یا 45 پونڈ فی مربع انچ) بنا لیں اور دوران زہرپاشی پمپ کو حسب ضرورت چلاتے رہیں تاکہ پریشر برقرار رہے۔ ان سپرئیئرزپر پریشر گیج اور پریشر کنٹرول سسٹم لگاہوناچاہئے ۔ دوران زہرپاشی اپنی حفاظت کیلئے سپرے ہونے والی قطار اور اپنے درمیان ایک قطار خالی رکھیں جس پر ابھی سپرے نہ ہوا ہو۔ سپرے ہوا کے مخالف نہ کریں کیونکہ اس طرح ایک تو سپرے یکساں نہیں ہوتا بلکہ یہ طریقہ سپرے کرنے والے کیلئے بھی خطرناک ہے۔ ترجمان نے مزید کہا کہ بوم سپرئیر سے سپرے کرتے وقت بہت زیادہ محتاط رہنے کی ضرورت ہے اور اس کیلئے تجربہ کار آپریٹر درکار ہوتا ہے۔ غیر تربیت یافتہ آپریٹر ان باتوں کا خیال نہیں کرسکتا جن کا بوم سپرئیر سے سپرے کرتے وقت ملحوظ رکھنا اشد ضروری ہے۔ بوم سے سپرے کرتے وقت سب سے پہلے یہ دیکھیں کہ بوم فصل اور زمین کے متوازی ہے ایک طرف کو جھکی یا اٹھی ہوئی بوم غیر یکساں سپرے کا موجب بنے گی۔ زہر پاشی کھیت میں شروع کرنے سے قبل یہ چیک کرلیں کہ تمام نوزلز چل رہی ہیں۔ اگر بوم کے ہر سیکشن کو علیحدہ علیحدہ سپلائی دی گئی ہے تو تمام سیکشن کے والز بروقت کھولیں اگر ذرا سی غفلت یا لاپرواہی سے کسی سیکشن کا والو نہ کھولا گیا تو فصل کے کچھ حصہ پر زہرپاشی نہیں ہوگی۔ سپرے کرتے وقت یہ خیال کریں کہ بوم کی اونچائی فصل سے کتنی ہے بہت زیادہ اونچائی یا بہت کم اونچائی غیر یکساں سپرے کا سبب بنتی ہے بوم کی اونچائی فصل سے اتنی ہو کہ ایک نوزل کے پھوار دوسری نوزل کی پھوار پر 30 سے 40 فیصد اوورلیپ ہورہی ہو۔ نوزل کا زاویہ اور نوزل سے نوزل کا درمیانی فاصلہ بوم کی اونچائی سیٹ کرنے میں بہت اہمیت کا حامل ہے۔ نوزل سے نوزل کا درمیانی فاصلہ ہر بوم پر مختلف ہوسکتا ہے۔ جب فصل کا قد چھوٹا ہو اور پودے پر لگے پتے زمین کو مکمل طور پر ڈھانپ نہ رہے ہوں تو ایسی صورت میں سپرے محلول کو ضائع ہونے سے بچانے کیلئے بوم کو فصل کے نزدیک رکھیں۔ بوم پر ہر نوزل اڑھائی فٹ پر لگی ہو تاکہ سپرے عین پودے کی قطار کے اوپر ہو۔ اکثر اوقات بوم بنانے والے بوم کے آخری سرے پر ایک نوزل ایک خاص زاویہ پر لگادیتے ہیں تاکہ سپرے کی چوڑائی کو بڑھایا جاسکے یہ طریقہ انتہائی غلط ہے اس طریقہ سے آخری قطاروں پر سپرے بالکل غیر یکساں ہوتا ہے۔ اگر فصل گھنی ہو تو نیچے سے سپرے کرنے والے نوزل کا استعمال بھی کر لینا چاہیے۔

مزید : کامرس