پانامہ فیصلہ ، سیاسی صورت حال پر پارلیمنٹ کے کردار پر بحث کا فیصلہ ، اداروں کے درمیان تصادم نہیں، ڈائیلاگ کی ضرورت ہے: رضا ربانی

پانامہ فیصلہ ، سیاسی صورت حال پر پارلیمنٹ کے کردار پر بحث کا فیصلہ ، اداروں ...
پانامہ فیصلہ ، سیاسی صورت حال پر پارلیمنٹ کے کردار پر بحث کا فیصلہ ، اداروں کے درمیان تصادم نہیں، ڈائیلاگ کی ضرورت ہے: رضا ربانی

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن) چیئر مین سینٹ رضا ربانی نے پانامہ فیصلے کے بعد پیدا ہونے والی سیاسی صورت حال کے پیش نظر پارلیمنٹ کے کردار پر بحث کرانے کا فیصلہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ ملک اداروں کے درمیان تصادم کا متحمل نہیں ہوسکتا اس لئے اداروں کے درمیان تصادم کی نہیں بلکہ ڈائیلاگ کی ضرورت ہے۔

معاشی ترقی کے لئے امن و استحکام ناگزیر ، سی پیک کے خلاف سازشوں کا ناکام بنائیں گے: احسن اقبال

پانامہ کیس کے فیصلے کے بعد پیدا ہونے والی سیاسی صورت حال پر چیئرمین سینٹ بھی میدان میں آگئے ہیں۔ رضا ربانی نے سیاسی صورتحال پرپارلیمنٹ کے کردارپربحث کرانے کا فیصلہ کرلیا ہے جبکہ چیئرمین سینیٹ رضا ربانی نے ”انٹراانسٹی ٹیوشنل “ڈائیلاگ شروع کرنے کی اجازت دے دی ہے۔چیئرمین سینٹ کا کہنا تھا کہ اداروں کے درمیان تصادم نہیں ہوناچاہیے،ڈائیلاگ کی ضرورت ہے۔یہ حکومت یا اپوزیشن نہیں پورے ایوان کا معاملہ ہے۔ سینیٹ اداروں کے مابین ڈائیلاگ کرانے جارہاہے،عدلیہ،فوج ،حکومت کے درمیان ”انٹراانسٹی ٹیوشنل ڈائیلاگ“ ہوں گے۔پارلیمنٹ کے کردارپربحث سینیٹ کی ہول کمیٹی میں کرائی جائے گی۔پارلیمنٹ کو اختیارات دینے کے لیے کمیٹی آف ہول کی تحریک تیار ہونی چاہیے۔ٹھوس تجاویز آنے تک سینیٹ کی ہول کمیٹی کے اجلاس ہوں گے۔

مزید : قومی /اہم خبریں