سابق وزیر اعظم سفارش پر لائے اور میرٹ پر نکالے گئے ’ ’ روک سکو تو روک لو‘‘ نوازشریف 130کلومیٹر کی سپیڈ سے راولپنڈی سے رخصت ہوگیا: نیئر حسین بخاری

سابق وزیر اعظم سفارش پر لائے اور میرٹ پر نکالے گئے ’ ’ روک سکو تو روک لو‘‘ ...
سابق وزیر اعظم سفارش پر لائے اور میرٹ پر نکالے گئے ’ ’ روک سکو تو روک لو‘‘ نوازشریف 130کلومیٹر کی سپیڈ سے راولپنڈی سے رخصت ہوگیا: نیئر حسین بخاری

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)سابق چیئرمین سینیٹ اورپاکستان پیپلزپارٹی کے مرکزی سیکرٹری جنرل سید نیئر حسین بخاری نے کہا ہے کہسابق وزیر اعظم نواز شریف  سفارش پر لائے اور میرٹ پر نکالے گئے ،عوام کی مکمل لاتعلقی نے چیونٹی کو دیا گیا شیر کا لقب واپس لے لیا، ’ ’ روک سکو تو روک لو‘‘ نوازشریف 130کلومیٹر کی سپیڈ سے راولپنڈی سے رخصت ہوگیا، ایئر کنڈیشنڈ اور بلٹ پروف گاڑیوں کی نمائش سے عوام کے دلوں میں جگہ بنانانا ممکن ہے ۔

تفصیلات کے مطابق پیپلز پارٹی کے مرکزی سیکرٹری جنرل سید نیئر حسین بخاری کا کہنا تھا کہ  پنجاب ہاؤس اسلام آباد سے پنجاب ہاؤس راولپنڈی کے فلاپ شو کے بعدپنڈی سے لاہور کے رستوں میں سرکاری ملازمین سے ناکام استقبال نے خود ساختہ رہنماء کی اصلیت سے پردہ اٹھایا دیا ہے۔ انہوں نے کہا حکومتی اختیارات کے استعمال سے سرکاری ملازمین کوریلیوں کی رونق بڑھانے کے لیے حاضری کا پابند توبنایا جاسکتا ہے لیکن ایئر کنڈیشنڈ اور بلٹ پروف گاڑیوں کی نمائش سے عوام کے دلوں میں جگہ بنانانا ممکن ہے ۔ نیئربخاری نے کہا کہ  نواز شریف سفارش پر لائے گئے اور  میرٹ پر نکالے گئے ہیں ، یہی وجہ ہے کہ رخصتی کے تمام راستوں پر شہریوں نے گھر بھجوائے جانے والے کی طرف نظر اٹھاکر بھی نہیں دیکھا ۔ انہوں  نے کہا کہ جس تیز رفتاری سے نوازشریف کی سیاسی موت واقع ہوئی ہے مکافات عمل کے ساتھ ساتھ مقام عبرت بھی ہے ۔ نیئر حسین بخاری نے اس امکان کا بھی اظہار کیا ہے کہ پنڈی سے لاہور رخصتی کے رستوں میں ممبران قومی و صوبائی اسمبلی کی طرف سے قابل ذکر استقبال نہ کرانا تاحیات نااہل نوازشریف کے خلاف مکمل عدم اعتماد کا باقاعدہ اعلان کسی بھی وقت کیا جاسکتا ہے۔

مزید : قومی