کرکٹ کوچ،سینئرز کی توہین، صرف نوجوانوں پر بھروسہ!

کرکٹ کوچ،سینئرز کی توہین، صرف نوجوانوں پر بھروسہ!

کرکٹ بورڈ نے 33 کھلاڑیوں کو مرکزی کنٹریکٹ دیئے ہیں۔ ان کو اے سے ای تک پانچ درجوں میں تقسیم کیا ہے۔ اولیت حاصل کرنے والوں میں بابر اعظم نے جگہ بنالی ہے جبکہ سابق کپتان محمد حفیظ کو اے سے بی درجہ میں جگہ دی گئی یوں ان کی تنزلی ہو گئی ہے۔ پاکستان کرکٹ ٹیم کے کوچ مکی آرتھر کا رویہ سینئر حضرات سے ایسا ہے کہ وہ دل برداشتہ ہو کر خود ہی ٹیم سے الگ ہو جائیں۔ وہ تمام تر انحصار اب نئے کھلاڑیوں پر کر رہے ہیں۔ حالانکہ ایسا دنیائے کرکٹ میں کسی جگہ نہیں ہوتا۔ ہر ملک اپنی ٹیم میں پرانے اور نئے کھلاڑیوں کا امتزاج رکھتا ہے اور سینئر کی جگہ بتدریج جونیئرز کو موقع دیتے اور ان کی حوصلہ افزائی کرتے ہیں۔ اس سے ٹیم میں کھلاڑیوں کی کمی نہیں ہو پاتی، پاکستان کرکٹ ٹیم میں یوں بھی اب سینئر کھلاڑی رہ کہاں گئے ہیں؟ محمد حفیظ کے علاوہ ایک شعیب ملک ہی سینئر ہیں۔ اب محمد حفیظ کی حوصلہ شکنی کی گئی وہ بھی دل برداشتہ ہیں اور ریٹائرمنٹ کا سوچنے لگے ہیں۔مکی آرتھر شاید بہت بڑی غلط فہمی میں مبتلا ہو گئے ہیں۔ جس کی وجہ زمبابوے جیسی بکھری اور کمزور ٹیم سے سیریز کا جیتنا ہے۔ اس سیریز میں فخر زمان اور دوسرے نئے کھلاڑیوں نے محنت کی اور اچھے کھلاڑی ثابت ہوئے۔ اب مکی آرتھر اپنے کم تجربہ کار کھلاڑیوں کے ساتھ آئندہ برس ورلڈ کپ جیتنے کا یقین رکھتے ہیں، اس سے پہلے وہ عمر اکمل کا کیریئر تباہ کر چکے اور اب احمد شہزاد بھی باہر ہو گیا، اگرچہ ان دونوں کھلاڑیوں نے خود بھی اپنے ساتھ برا کیا تاہم اگر یہ بگڑے بچے تھے تو ان کو ٹھیک کرنا بھی تو بڑوں کا کام ہوتا ہے نا کہ ان کو الگ ہی کر دیا جائے۔ یہ دونوں بڑے کھلاڑی اور میچ ونر ہیں۔ اس کے لئے ان دونوں کے نفسیاتی علاج کی ذمہ داری بھی بورڈ پر تھی، اب تو ان کو باہر نکال کر درد سر ہی ختم کر دیا گیا ہے۔بورڈ والے، کوچ اور چیف سلیکٹر تجربے کرنا اور نئے کھلاڑیوں پر انحصار کرنا چاہتے ہیں تو ضرور کریں لیکن اس کے لئے یہ طریقہ بالکل غلط اور ناروا ہے کہ سینئر کو یا تو ٹیم سے باہر نکال دیا جائے یا پھر ان کے ساتھ ایسا سلوک کیا جائے کہ وہ خود ہی دل برداشتہ ہو کر چھوڑ جائیں۔ یہ مناسب نہیں ان کی اصلاح ضروری ہے۔ اس طرح تو نئے نوجوان کھلاڑیوں پر بھی بوجھ پڑتا ہے اور اپنی فارم ثابت کرنے میں پریشانی ہوتی اور یہ درست کرنے کی ضرورت ہے۔

مزید : رائے /اداریہ