بورڈ آفٹیکنیکل ایجوکیشن کے دفتر میں شجر کاری مہم کا آغاز

بورڈ آفٹیکنیکل ایجوکیشن کے دفتر میں شجر کاری مہم کا آغاز

لاہور(فلم رپورٹر)بورڈ آف ٹیکنیکل ایجوکیشن کے دفتر میں اداکارہ و ماڈل ماہ نور اور سینئر اداکار عباس باجوہ نے پودا لگا کر شجر کاری مہم کا آغاز کیا۔اس موقع پر ٹیکنیکل بورڈ کی چیئر پرسن یاسمین مہر النساء،ڈپٹی سیکرٹری سلمان ،کمپیوٹر انچارج فاطمہ، ڈائریکٹر سپورٹس سلطان،اکاؤنٹ آفیسر اکرم ورک،کنٹرولر امتحانات پروفیسر طارق ملک ، سیکرٹری امتیاز نذیر ،صدر یونین ملک الیاس ،جنرل سیکرٹری تواب وسیم اور میڈم جویریہ بھی موجود تھیں۔میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے چیئر پرسن یاسمین مہر النساء نے کہا کہ ہم اداکارہ ماہ نور کا اس کار خیر کے لئے وقت نکالنے پر دل کی گہرائیوں سے شکریہ ادا کرتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ جنگلات ہمارے ماحول کو آلودگی سے بچانے میں اہم کردار ادا کرتے ہیں زمینی کٹاؤ،سیلاب گرمی سردی سے بھی محفوظ رکھتے ہیں پاکستان میں جنگلات کی رقبہ کے لحاظ سے کوئی بڑی تعداد نہیں ہے اس کی بڑی وجہ یہ ہے کہ پاکستان ایک زرعی ملک کے ساتھ ساتھ صنعتی ملک بھی ہے اس کی پیداوار کا بہت بڑا حصہ لکڑی کی چیزیں بنا کر پورا ہوتا ہے پاکستان میں اسی نظریہ کو دیکھتے ہوئے ہر سال لاکھوں کی تعداد میں درخت کاٹ دیے جاتے ہیں اور مختلف قسم کی اشیاء کی تیاری میں لگا دیے جاتے ہیں۔ماہ نور نے کہا کہ درختوں کی روز بروز بڑھتی کٹائی ایک لمحہ فکریہ ہے کیونکہ جس رفتار سے کٹائی ہو رہی اس کے مقابلے میں پیداور نہ ہونے کے برابر ہے۔عباس باجوہ نے کہا کہ پاکستان میں ہر سال دو مرتبہ شجر کاری کا سیزن آتا ہے پہلا جنوری کے وسط سے شروع ہو کر مارچ کے وسط تک جبکہ دوسرا سیزن جولائی سے ستمبر کے وسط تک لیکن شجر کاری کے موسم میں اْس تعداد سے پودے نہیں لگائے جاتے جس رفتار سے درختوں کا خاتمہ کیا جاتا ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1