غرور اور تکبر کا ایسا خطرناک انجام کہ آپ کبھی ایسا سوچنا بھی گوارا نہیں کریں گے

غرور اور تکبر کا ایسا خطرناک انجام کہ آپ کبھی ایسا سوچنا بھی گوارا نہیں کریں ...
غرور اور تکبر کا ایسا خطرناک انجام کہ آپ کبھی ایسا سوچنا بھی گوارا نہیں کریں گے

  

میں نے ان سے ایک ایسا سوال پوچھا جو میرے دل میں ہمیشہ سے کھٹکتا چلا آ رہا ہے ۔ میں نے ان سے پوچھا ”دنیا کا ہر کامیاب انسان آخر میں تنہا کیوں ہوتا ہے؟ انہوں نے فوراً جواب دیا ”اپنے تکبر اور غرور کی وجہ سے۔“ میں ان سے تفصیل کا متقاضی تھا‘ وہ بولے: ”دنیا میں تکبر کی سب سے بڑی شکل سیلف میڈ ہے۔“ میں نے حیرت سے ان کی طرف دیکھا‘ انہوں نے فرمایا: ”جب کوئی انسان اپنے آپ اور اپنی کامیابیوں کو سیلف میڈ کا نام دیتا ہے تو وہ نہ صرف اللہ تعالیٰ،قدرت اور فطرت کی نفی کرتا ہے بلکہ وہ ان تمام انسانوں کے احسانات اور مہربانیوں کو بھی روند ڈالتا ہے جنہوں نے اس کی کامیابی میں مرکزی کردار ادا کیا تھا اور یہ دنیا کا بدترین تکبر ہوتا ہے۔وہ رکے چند لمحے سوچا اور اس کے بعد بولے ”تم فرعون اور نمرود کو دیکھ لو ، یہ دونوں انتہا درجے کے ذہین، فطین اور باصلاحیت حکمران تھے، فرعون نے نعشوں کو حنوط کرنے کا طریقہ ایجاد کیا تھا، اس نے ایک ایسی سیاہی بھی بنوائی تھی جو قیامت تک مدھم نہیں ہوتی، اس نے ایسے احرام بھی تیار کئے تھے جن کی ہیئت کو آج تک کی جدید سائنس نہیں سمجھ پائی، اس نے دنیا میں آبپاشی کا پہلا نظام بھی بنایا تھا اور فرعون کے دور میں مصر کے صحراؤں میں بھی کھیتی باڑی ہوتی تھی لیکن یہ فرعون بعدازاں عبرت کی نشانی بن گیا۔ کیوں؟“۔۔

۔۔۔ویڈیو دیکھیں۔۔۔

مزید : ویڈیو گیلری