کرپشن کی روک تھام اور ورکنگ پلان پر کوئی منصوبہ بندی نہیں کی گئی،چودھری اعظم

کرپشن کی روک تھام اور ورکنگ پلان پر کوئی منصوبہ بندی نہیں کی گئی،چودھری اعظم

  

لاہور (پ ر)مسلم لیگ نوازکے سیاسی رہنما وسماجی کارکن پی پی 165 چوہدری اعظم سندھو نے اپنے جاری بیان میں کہا ہے کہ قومی اداروں کو تباہ کرنے میں موجودہ حکمرانوں نے کوئی کسر نہیں چھوڑی، آج یہ وقت آ گیا ہے کہ پی آئی اے پر یورپی یونین نے پابندی عائد کر دی، اسٹیل مل بند پڑی ہے۔

، باقی ادارے آخری ہچکیاں لے رہے ہیں۔

، کرپشن، اقربا پروری، میرٹ کا قتل اور غلط منصوبہ بندی نے اداروں کو دیوالیہ کر دیا ہے، غیر جانبدار اور میرٹ پر پرائیوٹائزیشن کی جاتی تو آج حالات بہتر ہوتے، کرپشن کی روک تھام اور ورکنگ پلان پر کوئی منصوبہ بندی نہیں کی گئی۔

انہو ں نے مزید کہاکہبجٹ کے اعلان کے بعد پہلے ہفتے کے دوران ہی مارکیٹ میں آٹے، چاول، چکن، ٹماٹر، آلو، پیاز، دودھ، دہی اور گوشت سمیت کھانے پینے اور روزمرہ استعمال کی 22 بنیادی اشیاء مہنگی ہو گئیں۔ پاکستان ادارہ شماریات کے مطابق رواں ہفتے کے دوران کھانے پینے اور روزمرہ استعمال کی 22 اشیا کی قیمت میں 39 فیصد تک اضافہ رکارڈ کیا گیا جس سے مہنگائی میں اضافے کی اوسط شرح 1.02 فیصد اضافے سے 9.9 فیصد تک پہنچ گئی۔ انہوں نے کہا کہ ملک میں حکومت نام کی کوئی چیز موجود نہیں رپورٹ کے مطابق ہفتے کے دوران کھانے پینے اور روزمرہ استعمال کی 51 بنیادی اشیا میں سے 39 گزشتہ سال کے مقابلے میں 82 فیصد تک مہنگی فروخت ہوئیں۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -